بیروت دھماکہ: ’میں سمجھا کہ بس میں مرنے والا ہوں‘ - BBC News اردو

لبنان کے دارالحکومت بیروت میں بندرگاہ کے علاقے میں منگل کی شام ہونے والے دھماکے نے پورے شہر کو ہلا کر رکھ دیا ہے اور عینی شاہدین کے مطابق دھماکہ اتنا شدید تھا کہ لگا جیسے قیامت آ گئی ہے۔

05/08/2020 10:11:00 AM

’یہ سب مجھے سنہ 2000 کی یاد دلا رہا ہے جب اسرائیل لبنان پر بمباری کر رہا تھا اور میں وہیں متاثرہ علاقے کے قریب موجود تھا اور میں سمجھا تھا کہ میں مرنے والا ہوں ایسا ہی میں نے آج بھی محسوس کیا۔‘

لبنان کے دارالحکومت بیروت میں بندرگاہ کے علاقے میں منگل کی شام ہونے والے دھماکے نے پورے شہر کو ہلا کر رکھ دیا ہے اور عینی شاہدین کے مطابق دھماکہ اتنا شدید تھا کہ لگا جیسے قیامت آ گئی ہے۔

5 اگست 2020، 07:15 PKTاپ ڈیٹ کی گئی 25 منٹ قبل،تصویر کا ذریعہ،تصویر کا کیپشندھماکے کے نتیجے میں بیروت کی گلیوں میں افراتفری اور خوف کا عالم ہےلبنان کے دارالحکومت بیروت میں بندرگاہ کے علاقے میں منگل کی شام ہونے والے دھماکے نے پورے شہر کو ہلا کر رکھ دیا ہے۔

پشاور میں دلیپ کمار اور راج کپور کے گھروں کو محکمۂ آثارِ قدیمہ کو دینے کا فیصلہ - BBC News اردو خاتون رکن اسمبلی کا معاملہ؛ طلال چوہدری پولیس کو بیان دیے بغیراسپتال سے غائب - ایکسپریس اردو پاکستان کے محمد راشد نے بھارت کو شکست دیکر اخروٹ توڑنے کا عالمی ریکارڈ بنا ڈالا - ایکسپریس اردو

دھماکے کے نتیجے میں شہر میں بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی ہے اور اس واقعے میں 75 سے زیادہ افراد کی ہلاکت اور چار ہزار سے زیادہ کے زخمی ہونے کی تصدیق کی گئی ہے۔دھماکہ اتنا شدید تھا کہ اس نے نہ صرف بندرگاہ کے نواحی علاقے کو تباہ و برباد کر دیا بلکہ دس کلومیٹر دور تک اس کے اثرات محسوس کیے گئے۔

اس دھماکے کے بعد ذرائع ابلاغ اور سوشل میڈیا پر اس سے ہونے والی تباہی کی تصاویر گردش کرنے لگیں۔واقعے کے ایک عینی شاہد نے خبر رساں ادارے اے ایف پی کو بتایا کہ وہ جہاں سے بھی گزر رہے تھے وہاں شیشے اور تباہ شدہ عمارتوں کا ملبہ تھا۔صحافی محمد نجیم نے بتایا کہ جب دھماکہ ہوا تو وہ گیارہویں منزل پر موجود تھے۔

،تصویر کا ذریعہGetty Images،تصویر کا کیپشندھماکے کے بعد ایک شخص ایک زخمی لڑکی کو طبّی امداد فراہم کرنے کے لیے اٹھا کر لے جا رہا ہےان کا کہنا تھا کہ ’میں نے دو بڑے دھماکوں کی آواز سنی۔ میں سمجھا کہ عمارت زمیں بوس ہو رہی ہے۔ میں بچنے کی کوشش کر رہا تھا۔ میں ٹھیک ہوں لیکن میرے پاؤں سے تھوڑا سا خون نکل رہا ہے۔ یہ سب مجھے سنہ 2000 کی یاد دلا رہا ہے جب اسرائیل لبنان پر بمباری کر رہا تھا اور میں وہیں متاثرہ علاقے کے قریب موجود تھا اور میں سمجھا تھا کہ میں مرنے والا ہوں ایسا ہی میں نے آج بھی محسوس کیا۔‘

ایک عینی شاہد لعیت بلاؤت نے بتایا کہ دھماکے کے بعد 'ہر کوئی زمین پر گر گیا۔ مجھے یاد ہے میں نے جب آنکھیں کھولیں تو زمین پر مجھے دھول اور تباہ شدہ عمارتوں کا ملبہ دکھائی دے رہا تھا۔’یہ سب اس مال میں اڑ رہا تھا جہاں ہم لوگ موجود تھے۔ اور پھر اچانک شیشے ٹوٹ گئے اور ایسے الارم بجنا شروع ہوئے جیسے جنگ کے وقت ہوتے ہیں۔‘

انھوں نے بتایا کہ مال کے مرکزی دروازے پر موجود شیشے بھی ٹوٹ گئے اور فرش پر خون تھا۔ وہاں پارکنگ میں دھماکے کی شدت زیادہ تھی ہم نے دیکھا کہ ایک خاتون اس کی شدت سے کئی میٹر دور جا گری۔،تصویر کا ذریعہ،تصویر کا کیپشنجائے وقوعہ سے ایک زخمی کو ہسپتال منتقل کیا جا رہا ہے

صحافی سونیوا روس کا کہنا ہے کہ لبنان کی گلیوں میں ٹوٹے ہوئے شیشے اور تباہ عمارتوں کا ملبہ بکھرا پڑا ہے اور ایمبولینسز کے لیے اس ملبے سے گزرنا مشکل ہے۔ان کا کہنا ہے کہ بندرگاہ پہنچنے پر انھیں بتایا گیا کہ فوج کی جانب سے اسے بند کر دیا گیا ہے۔ فوج نے خبردار کیا ہے کہ جائے وقوعہ سے دور رہا جائے تاکہ ممکنہ طور پر مزید دھماکے سے نقصان نہ ہو۔

بات سے بات: جی ایچ کیو پر ایک بورڈ لگا دیں - BBC News اردو طلال چوہدری نے ن لیگ اور پوری سیاست کا سرشرم سے جھکا دیا، فیاض الحسن چوہان - ایکسپریس اردو نواز شریف کی تقریر کے بعد بہت سے (ن) لیگی رابطے کر رہے ہیں، شبلی فراز

ہادی نصراللہ دھماکے کے وقت ٹیکسی میں سفر کر رہے تھے۔ انھوں نے بتایا کہ اچانک کچھ دیر کے لیے مجھے سنائی دینا بند ہو گیا۔ میں شاید دھماکے کے مقام کے بہت قریب تھا۔ مجھے معلوم تھا کہ کچھ غلط ہوا ہے اور پھر گاڑی کے شیشے ٹوٹ گئے۔انھوں نے بتایا کہ دھماکے کے بعد شام دیر تک آسمان پر سیاہ دھویں کے بادل چھائے تھے۔ پورا شہر اندھیرے میں ڈوبا ہوا تھا اور زمین پر چلنا مشکل ہو رہا تھا۔

ان کے مطابق بہت بڑی تعداد میں لوگ زخمی تھے۔ ’میں نے 86 سالہ خاتون کو دیکھا جنھیں ایک ڈاکٹر طبی امداد دے رہے تھے۔‘ان کا کہنا ہے کہ وہ اپنے گھر سے بھی فرسٹ ایڈ باکس لے کر دوڑتے ہوئے باہر آئے جہاں گاڑیاں مکمل طور پر تباہ ہو چکی تھیں اور پرانے طرز پر بنے گھروں کا ملبہ گلیوں میں پڑا ہوا تھا۔

مزید پڑھ: BBC News اردو »

Sawal Awam Ka-part All-ep-24371-2020-09-26-Sawal Awam ka: 26 | Dunya News

Sawal Awam ka: 26 September 2020

بیروت میں دھماکے کے بعد کے مناظر - BBC News اردولبنان کے دارالحکومت بیروت میں درجنوں افراد ہلاک اورہزاروں زخمی ہوئے ہیں۔ لبنان کے سکیورٹی چیف کا کہنا ہے کہ یہ دھماکہ اس علاقے میں ہوا ہے جہاں بڑی تعداد میں بارودی مواد موجود تھا۔

کورونا وبا میں کمی؛ ملک بھر میں بینکوں کے معمول کے اوقات کار بحال - ایکسپریس اردوبینک پیر تا جمعرات صبح 9:30 سے شام 5:30 جب کہ جمعے کو صبح 9 بجے سے شام 6 بجے تک کھلے رہیں گے

جون کے مقابلے میں جولائی میں مہنگائی میں 2.50 فیصد اضافہ | Abb Takk News

بیروت میں دھماکے سے ہونے والی تباہی، تصاویر میں - BBC News اردولبنان کے دارالحکومت بیروت میں ہونے والے زوردار دھماکے کے نتیجے میں جانی نقصان کے علاوہ عمارتیں اور املاک بھی تباہ ہوئیں۔

بیروت میں دو خوفناک دھماکوں میں 78 افراد جاں بحق، 4 ہزار سے زائد زخمی

لبنان کے دارالحکومت بیروت میں خوفناک دو دھماکے، 10 افراد جاں بحق، سینکڑوں زخمیبیروت: (ویب ڈیسک) لبنان کے دارالحکومت بیروت میں دو خوفناک دھماکے ہوئے ہیں جس کے باعث دس افراد جاں بحق ہوئے ہیں جبکہ سینکڑوں افراد زخمی ہونے کی اطلاعات ہے۔