امریکی صدر جوبائیڈن کی اہلیہ اور بیٹی کا روس میں داخلہ بند

28/06/2022 8:50:00 PM

مزید پڑھیں

امریکی صدر جوبائیڈن کی اہلیہ اور بیٹی کا روس میں داخلہ بند arynewsurdu

مزید پڑھیں

28 جون 2022روس نے امریکی صدر جوبائیڈن کی اہلیہ اور بیٹی سمیت 25 اعلیٰ امریکی شخصیات کے اپنے ملک میں داخلے پر پابندی عائد کردی ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق روسی وزارت خارجہ نے ان نئی پابندیوں کا اعلان منگل کے روز کیا گیا ہے اور جاری کردہ اسٹاپ لسٹ میں شامل افراد کی تفصیل کے ساتھ ایک نوٹ بھی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ’امریکا کی جانب سے روس کی سیاسی اور عوامی شخصیات پر تسلسل سے لگائی جانی والی پابندیوں کے ردعمل میں 25 امریکی شہریوں کو سٹاپ لسٹ میں شامل کیا گیا ہے۔‘

روس کی نئی ’اسٹاپ لسٹ‘ امریکی یونیورسٹیوں کے کچھ پروفیسرز کے علاوہ سابق حکومت کے عہدے داروں کے نام بھی شامل ہیں، جن افراد پر پابندی لگائی گئی ہے ان میں سوسان کولن، مک میکونیل، چارلس گریسلی، کیرسٹین گیلیبرینڈ سمیت کئی امریکی سینیٹرز کے نام شامل ہیں۔رواں برس 24 فروری سے روس اور یوکرین میں جنگ کے بعد امریکا اور یورپی ممالک کے روس کے ساتھ تعلقات کشیدہ ہیں اور یورپی ممالک وامریکا کی جانب سے روس پر دباؤ ڈالنے کے لیے کئی طرح کی پابندیاں عائد کی گئی ہیں، دوسری جانب روسی گیس کی سپلائی میں ممکنہ بندشوں کے پیش نظر مغربی ممالک میں مہنگائی میں اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے۔

مزید پڑھ:
ARY News Urdu »

👍 تالیاں 😜 بلاک کرنے کا طریقہ hd ہو گیا 🤣 Good setup by putin

امریکی صدر کا بڑا فیصلہ گن ریفارمز بل پر دستخط کر دیےامریکی صدر جو بائیڈن نے گزشتہ تین دہائیوں میں اپنی نوعیت کی پہلی بڑی اصلاحات کو ممکن بنانے والے فیڈرل گن ریفارمز بل پر دستخط کر دیے ہیں، صدر کے دستخط کے بعد سے

عالمی بالا دستی کی جنگ میں امریکی سازشیں - ایکسپریس اردوسازشوں کے ذریعے سوویت یونین کو افغانستان میں داخل ہونے پر مجبور کیا گیا

دوسری جنگِ عظیم میں تباہ امریکی جہاز کی باقیات مل گئیں - ایکسپریس اردوسیموئیل بی رابرٹس جہاز میں 224 افراد سوار تھے مزید پڑھیے: expressnews

سابق امریکی پائلٹ چین کو امریکہ کی خفیہ معلومات کیسے فروخت کرتا رہا؟ - BBC News اردوحکام کے مطابق سابق پائلٹ نے شعبہ ہوا بازی سے متعلق اہم اور خفیہ معلومات پین ڈرائیو میں منتقل کیں اور انھیں چینی شخص کے حوالے کیا جس کے عوض ملنے والی رقم اپنی سوتیلی بیٹی کے جنوبی کوریا کے بینک اکاؤنٹ میں منتقل کروائی۔ 9 ایسے 🤦‍♂️ انگریز تو شروع سے ہی لالچی ہیں

برطانوی وزیراعظم نے امریکی شہریت چھوڑنے کی حیران کن وجہ بتادیلندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانوی وزیراعظم بورس جانسن 1964ءمیں امریکہ کے شہر نیویارک میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کے والدین اس وقت امریکہ میں کام کرتے تھے۔ وہاں پیدا ہونے

امریکی ریاست ٹیکساس میں ٹرالر سے 46 افراد کی لاشیں بر آمدامریکی ریاست ٹیکساس کے شہر سان انتیونیو میں ایک  ٹرالر سے 46 افراد کی لاشیں بر آمد کی گئی ہیں۔15 افراد کو اسپتال منتقل کر دیا گیا۔غیر ملکی میڈیا کے texasgov StateDept اللھم انی اعوذ بک افسوس جن ممالک سے تعلق رکھتے ہیں ان کی حکومت اگر ظالم نہ ہوتیں تو یہ چند دنوں کی زندگی کی آسائش کے لیے زندگی نہ گنواتے ۔

ویب ڈیسک 28 جون 2022 روس نے امریکی صدر جوبائیڈن کی اہلیہ اور بیٹی سمیت 25 اعلیٰ امریکی شخصیات کے اپنے ملک میں داخلے پر پابندی عائد کردی ہے۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق روسی وزارت خارجہ نے ان نئی پابندیوں کا اعلان منگل کے روز کیا گیا ہے اور جاری کردہ اسٹاپ لسٹ میں شامل افراد کی تفصیل کے ساتھ ایک نوٹ بھی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ’امریکا کی جانب سے روس کی سیاسی اور عوامی شخصیات پر تسلسل سے لگائی جانی والی پابندیوں کے ردعمل میں 25 امریکی شہریوں کو سٹاپ لسٹ میں شامل کیا گیا ہے۔‘ روس کی نئی ’اسٹاپ لسٹ‘ امریکی یونیورسٹیوں کے کچھ پروفیسرز کے علاوہ سابق حکومت کے عہدے داروں کے نام بھی شامل ہیں، جن افراد پر پابندی لگائی گئی ہے ان میں سوسان کولن، مک میکونیل، چارلس گریسلی، کیرسٹین گیلیبرینڈ سمیت کئی امریکی سینیٹرز کے نام شامل ہیں۔ رواں برس 24 فروری سے روس اور یوکرین میں جنگ کے بعد امریکا اور یورپی ممالک کے روس کے ساتھ تعلقات کشیدہ ہیں اور یورپی ممالک وامریکا کی جانب سے روس پر دباؤ ڈالنے کے لیے کئی طرح کی پابندیاں عائد کی گئی ہیں، دوسری جانب روسی گیس کی سپلائی میں ممکنہ بندشوں کے پیش نظر مغربی ممالک میں مہنگائی میں اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے۔ واضح رہے کہ رواں سال 7 اپریل کو روسی صدر ولادیمیر پوتن کی بیٹیوں پر امریکا کی جانب سے پابندیاں عائد کی گئی تھیں، جبکہ گزشتہ ہفتے یوکرین کو یورپی یونین میں شمولیت کے لیے بطور امیدوار ملک بھی تسلیم کیا گیا ہے۔ .اب  یہ قانونی مسودہ باقاعدہ طور پر قانون بن گیا ہے۔جوبائیڈن کا کہنا تھا کہ یہ بل وقت کی ضرورت تھا، جس سے کئی جانیں بچائی جا سکیں گی، اگرچہ اس بل وہ سب کچھ نہیں ہے جو میں چاہتا ہوں، لیکن اس میں وہ اقدامات شامل ہیں جن کے لیے میں نے طویل عرصے سے مطالبہ کیا تھا جس سے جانیں بچائی جائیں گی۔بندوق کی قانون سازی میں نوجوان خریداروں کے لیے بہتر پس منظر کی جانچ پڑتال اور ریاستوں کے لیے وفاقی نقد “ریڈ فلیگ” کے قوانین متعارف کرائے گئے ہیں جو عدالتوں کو عارضی طور پر ان لوگوں سے ہتھیار واپس لینے کی اجازت دیتے ہیں جنہیں خطرہ سمجھا جاتا ہے۔تاہم، بائیڈن اور دیگر ڈیموکریٹس کے مطلوبہ زیادہ سخت اقدامات اس میں شامل نہیں ہو سکے ہیں، جس کے تحت فوجی طرز کی رائفلوں پر پابندی تھی جس سے بڑے پیمانے پر فائرنگ سے زیادہ جانی نقصان ہونے کا خدشہ ہوتا ہے۔.۔ پھر سادہ لوح لاکھوں افغانوں کے ذریعے جہاد کے نام پر سوویت یونین کو شکست دے دی گئی۔ اور امریکا مفت میں دنیا کا بادشاہ بن گیا۔ اس جنگ میں ایک بھی امریکی فوجی نہیں مارا گیا۔ پیسے بھی بہت کم خرچ ہوئے۔ اس کام کے لیے عرب یورپین اتحادی کام آئے۔ یہاں تک کہ اس جنگ پر منشیات کی فروخت سے حاصل کردہ رقوم بھی خرچ کی گئیں۔ امریکا کی بلا سے کہ اس کے نتیجے میں پاکستان سمیت پوری دنیا میں لاکھوں، کروڑوں افراد ہیروئین کے عادی بن کر اپنی اور اپنے خاندان کی زندگیاں تباہ کر بیٹھے۔ یہ ہے انسان دوست امریکا کا حقیقی بھیانک چہرہ۔ امریکی ریڈ انڈین ہوں یا ویت نام یا عراق ہو یا ایران شام… امریکا اب تک دنیا پر اپنی عالمی بالادستی کے لیے کروڑوں افراد کو قتل کر چکا ہے۔ چاہے مزید کروڑوں افراد کو قتل کرنا پڑے۔ دنیا پر امریکی بادشاہی قائم رہنی چاہیے۔ رہے نام اللہ کا ۔.منیلا:  دوسری جنگ عظیم کے دوران فلپائن میں سمندر برد ہوجانے والے امریکی بحریہ کے جہاز کی باقیات برآمد ہوئی ہیں۔ برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق ٹیکساس میں مقیم زیر سمندر ٹیکنالوجی کمپنی کیلاڈن اوشینک نے دعویٰ کیا ہے کہ آٹھ ماہ کے دوران کے غوطہ خوروں نے “سیمی بی” کے ٹوٹے پھوٹے جہاز کو فلمایا جبکہ اسکی تصاویر بھی بنائی ہیں۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ دوسری جنگ عظیم کے دوران سیموئیل بی رابرٹس نامی جہاز فلپائن کے ساحلوں میں 7 ہزار میٹر یعنی (23 ہزار فٹ) گہرائی میں ڈوب گیا تھا، یہ جہاز سمر جریزے پر 25 اکتوبر 1944 کو جاپان کی کالونی فلپائن سے لڑنے پہنچا تھا۔ سمر کی جنگ میں تباہ ہونے والے جہاز کا امریکی اور جاپانی بحریہ کا آمنا سامنا ہوا جہاں توپ کا گولہ لگنے سے کروز شپ ڈوبا۔ امریکی بحریہ کے مطابق سیموئیل بی رابرٹس جہاز میں 224 افراد سوار تھے جس میں سے 89 ہلاک ہوگئے تھے جبکہ 135 کو 50گھنٹے بعد بچالیا گیا تھا۔ واضح رہے کہ اس جہاز کا ملبہ اب تک دریافت کیے جانے والے بحری جہازوں میں سب سے زیادہ گہرائی سے ملنے والا ملبہ ہے جبکہ اس سے قبل ٹائی ٹینک کا ملبہ تقریباً 4000 میٹر گہرائی میں ملا تھا۔.