\u0645\u06c1\u0646\u06af\u0627\u0626\u06cc \u06a9\u06d2 \u062e\u062f\u0634\u0627\u062a \u06a9\u06d2 \u0633\u0628\u0628 \u0628\u06be\u0627\u0631\u062a\u06cc \u0631\u0648\u067e\u06cc\u06c1 \u0688\u0627\u0644\u0631 \u06a9\u06d2 \u0645\u0642\u0627\u0628\u0644\u06d2 \u0645\u06cc\u06ba \u062a\u0627\u0631\u06cc\u062e \u06a9\u06cc \u06a9\u0645 \u062a\u0631\u06cc\u0646 \u0633\u0637\u062d \u067e\u0631

28/06/2022 9:35:00 PM

آنند راٹھی شیئرز اینڈ اسٹاک بروکرز کے محقق جیگار ترویدی نے کہا کہ انہیں لگتا ہے کہ بڑھتے ہوئے شرح سود اور تجارتی و کرنٹ اکاؤنٹ خسارے کے سبب روپے کی قدر کم کر سال کے آخر تک 80 سے 81 روپے ہو جائے گی۔ #DawnNews

آنند راٹھی شیئرز اینڈ اسٹاک بروکرز کے محقق جیگار ترویدی نے کہا کہ انہیں لگتا ہے کہ بڑھتے ہوئے شرح سود اور تجارتی و کرنٹ اکاؤنٹ خسارے کے سبب روپے کی قدر کم کر سال کے آخر تک 80 سے 81 روپے ہو جائے گی۔ DawnNews

\u0688\u0627\u0644\u0631 \u06a9\u06d2 \u0645\u0642\u0627\u0628\u0644\u06d2 \u0645\u06cc\u06ba \u0628\u06be\u0627\u0631\u062a\u06cc \u0631\u0648\u067e\u06d2 \u06a9\u06cc \u0642\u062f\u0631 0.6 \u0641\u06cc\u0635\u062f \u06af\u0631 \u06a9\u0631 .78.77\u0631\u0648\u067e\u06d2 \u06c1\u0648 \u06af\u0626\u06cc\u060c \u0627\u06cc\u06a9\u0648\u0679\u06cc \u0627\u0646\u0688\u06cc\u06a9\u0633 '\u0646\u0641\u0679\u06cc 50' \u0645\u06cc\u06ba \u0628\u06be\u06cc 0.4 \u0641\u06cc\u0635\u062f \u06a9\u06cc \u06a9\u0645\u06cc\u060c \u0631\u067e\u0648\u0631\u0679

بھارت میں ایک کیشیئر پیٹرول اسٹیشن پر ایک کمرے کے اندر بھارتی کرنسی چیک کر رہا ہے— فائل فوٹو: رائٹرزتیل کی زیادہ قیمتوں سے افراطِ زر کے خدشات کے سبب بھارت کی کرنسی امریکی ڈالر کے مقابلے میں تاریخ کی کم ترین سطح پر آگئی ہے، حالانکہ مرکزی بینک نے وقفے وقفے سے ڈالر کو فروخت کرکے نقصانات کو محدود کرنے میں مدد کی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے 'رائٹرز' کے مطابق ڈالر کے مقابلے میں بھارتی روپے کی قدر 0.6 فیصد گر کر 78 روپے 77 پیسے ہو گئی ہے جو کہ تمام تر سابقہ ریکارڈ کو توڑ کر گزشتہ ہفتے 78 روپے 39 پیسے ریکارڈ کی گئی تھی جبکہ اہم ایکوٹی انڈیکس 'نفٹی 50' میں بھی 0.4 فیصد کی کمی ہوئی۔

مزید پڑھ:
DawnNews »

Imran Khan Important Decisions | Zartaj Gul Exclusive Interview | PDM Negotiation Failed

Imran Khan Important Decisions | Zartaj Gul Exclusive Interview | PDM Negotiation Failed | Makhdoom Shahabuddin#ImranKhan #ZartajGul #MakhdoomShahabuddin #a... مزید پڑھ >>

\u062f\u0639\u0627 \u0632\u06c1\u0631\u0627 \u06a9\u06cc \u0639\u0645\u0631 \u06a9\u06d2 \u062a\u0639\u06cc\u0646 \u06a9\u06cc\u0644\u0626\u06d2 \u0645\u06cc\u0688\u06cc\u06a9\u0644 \u0628\u0648\u0631\u0688 \u062a\u0634\u06a9\u06cc\u0644\u060c \u0648\u0627\u0644\u062f\u06cc\u0646 \u06a9\u06cc \u062a\u0641\u062a\u06cc\u0634\u06cc \u0627\u0641\u0633\u0631 \u0628\u062f\u0644\u0646\u06d2 \u06a9\u06cc \u062f\u0631\u062e\u0648\u0627\u0633\u062a\u0628\u0648\u0631\u0688 \u06a9\u06cc \u0633\u0631\u0628\u0631\u0627\u06c1\u06cc \u0688\u0627\u0624 \u06cc\u0648\u0646\u06cc\u0648\u0631\u0633\u0679\u06cc \u0622\u0641 \u06c1\u06cc\u0644\u062a\u06be \u0633\u0627\u0626\u0646\u0633\u0632 \u06a9\u06cc \u067e\u0631\u0646\u0633\u067e\u0644 \u067e\u0631\u0648\u0641\u06cc\u0633\u0631 \u0635\u0628\u0627 \u0633\u06c1\u06cc\u0644 \u06a9\u0631\u06cc\u06ba \u06af\u06cc IrfanHaqueS MudassarNazir22 Bezati Ka Sabab bane Howe hen ye dono Kar li shadi to Chor do Pehle soye Howe the maa baap Agar tarbiyat ki Kami na Hoti to ye din na dekhna parta IrfanHaqueS MudassarNazir22 Matlab hakumat ki taraf say isuue karda birth certificate ki koi hesiyat nahi? ajab keh raha bhai...

\u0627\u0646\u0679\u0631\u0628\u06cc\u0646\u06a9 \u0645\u06cc\u06ba \u0688\u0627\u0644\u0631 \u06a9\u06cc \u0642\u062f\u0631\u0645\u06cc\u06ba \u06a9\u0645\u06ccمنگل کو انٹربینک میں روپے کے مقابلے میں ڈالر کی قدرمیں کمی دیکھی گئی۔ SamaaTV Dollar DollarRate SyedRizwanAmir1

\u0628\u062d\u0631\u0627\u0646 \u06a9\u06d2 \u0634\u06a9\u0627\u0631 \u0633\u0631\u06cc \u0644\u0646\u06a9\u0627 \u0645\u06cc\u06ba \u0627\u0633\u06a9\u0648\u0644 \u0628\u0646\u062f\u060c \u0627\u06cc\u0646\u062f\u06be\u0646 \u06a9\u06cc \u0628\u0686\u062a \u06a9\u06d2 \u0644\u06cc\u06d2 \u06af\u06be\u0631 \u0633\u06d2 \u06a9\u0627\u0645 \u06a9\u0631\u0646\u06d2 \u067e\u0631 \u0632\u0648\u0631\u0628\u062d\u0631\u0627\u0646 \u06a9\u06d2 \u0645\u062a\u0627\u062b\u0631\u06c1 \u062c\u0632\u06cc\u0631\u06c1 \u0646\u0645\u0627 \u0645\u0644\u06a9 \u0645\u06cc\u06ba \u0639\u0648\u0627\u0645\u06cc \u0633\u0641\u0631\u06cc \u0633\u06c1\u0648\u0644\u06cc\u0627\u062a\u060c \u0628\u062c\u0644\u06cc \u067e\u06cc\u062f\u0627\u0648\u0627\u0631\u060c \u0637\u0628\u06cc \u062e\u062f\u0645\u0627\u062a \u06a9\u06d2 \u0634\u0639\u0628\u06d2 \u06a9\u0648 \u0627\u06cc\u0646\u062f\u06be\u0646 \u06a9\u06cc \u062a\u0642\u0633\u06cc\u0645 \u0645\u06cc\u06ba \u062a\u0631\u062c\u06cc\u062d \u062f\u06cc \u062c\u0627\u0626\u06d2 \u06af\u06cc\u06d4

\u0628\u0631\u0637\u0627\u0646\u06cc\u06c1 \u0645\u06cc\u06ba \u0646\u0626\u06d2 \u0642\u0627\u0646\u0648\u0646 \u06a9\u06d2 \u062a\u062d\u062a \u067e\u0627\u0646\u0686 \u0644\u0627\u06a9\u06be \u067e\u0627\u06a9\u0633\u062a\u0627\u0646\u06cc\u0648\u06ba \u06a9\u06cc \u0628\u0631\u0637\u0627\u0646\u0648\u06cc \u0634\u06c1\u0631\u06cc\u062a \u062e\u0637\u0631\u06d2 \u0645\u06cc\u06ba\u0628\u0631\u0637\u0627\u0646\u0648\u06cc \u062d\u06a9\u0648\u0645\u062a \u06a9\u0627 \u06a9\u06c1\u0646\u0627 \u06c1\u06d2 \u06a9\u06c1 \u0627\u06af\u0631 \u0628\u0631\u0637\u0627\u0646\u0648\u06cc \u0634\u06c1\u0631\u06cc\u062a \u0631\u06a9\u06be\u0646\u06d2 \u0648\u0627\u0644\u06d2 \u0627\u0646 \u062a\u0627\u0631\u06a9\u06cc\u0646 \u0648\u0637\u0646 \u06a9\u06d2 \u067e\u0627\u0633 \u06a9\u0633\u06cc \u0627\u0648\u0631 \u0645\u0644\u06a9 \u06a9\u06cc \u0634\u06c1\u0631\u06cc\u062a \u06c1\u0648\u06af\u06cc \u062a\u0648 \u0627\u0646 \u06a9\u06cc \u0628\u0631\u0637\u0627\u0646\u0648\u06cc \u0634\u06c1\u0631\u06cc\u062a \u062e\u062a\u0645 \u06a9\u06cc \u062c\u0627\u0633\u06a9\u062a\u06cc \u06c1\u06d2 درست Kia ab yeh pakistan maen vote dalny ky mutalby per qaim rahen gy ya british nationality ko prefer karen gy, aik imtehan sir per nazar ata hey.

\u0627\u0648\u067e\u0646 \u0645\u0627\u0631\u06a9\u06cc\u0679 \u0645\u06cc\u06ba \u0688\u0627\u0644\u0631\u06a9\u06cc \u0642\u06cc\u0645\u062a \u0645\u06cc\u06ba \u0627\u0633\u062a\u062d\u06a9\u0627\u0645 \u0631\u06c1\u0627اوپن مارکیٹ میں ڈالرکی قیمت میں استحکام رہا Dollar

\u0628\u0644\u062f\u06cc\u0627\u062a\u06cc \u0627\u0646\u062a\u062e\u0627\u0628\u0627\u062a: \u067e\u06cc\u067e\u0644\u0632\u067e\u0627\u0631\u0679\u06cc \u0646\u06d2 \u0627\u06cc\u0645 \u06a9\u06cc\u0648 \u0627\u06cc\u0645 \u06a9\u06d2 \u0633\u0627\u062a\u06be \u0645\u0639\u0627\u06c1\u062f\u06d2 \u06a9\u06cc \u062e\u0644\u0627\u0641 \u0648\u0631\u0632\u06cc \u06a9\u06cc\u060c \u0648\u0633\u06cc\u0645 \u0627\u062e\u062a\u0631 \u06a9\u0627 \u0627\u0644\u0632\u0627\u0645\u062c\u06d2 \u06cc\u0648 \u0627\u0653\u0626\u06cc (\u0641) \u0627\u0648\u0631 \u062c\u06cc \u0688\u06cc \u0627\u06d2 \u06a9\u0627 \u0628\u06be\u06cc \u0628\u0644\u062f\u06cc\u0627\u062a\u06cc \u0627\u0646\u062a\u062e\u0627\u0628\u0627\u062a \u06a9\u06d2 \u0646\u062a\u0627\u0626\u062c \u0645\u0633\u062a\u0631\u062f \u0627\u0648\u0631 \u0627\u06cc \u0633\u06cc \u067e\u06cc \u06a9\u06d2 \u0635\u0648\u0628\u0627\u0626\u06cc \u062f\u0641\u062a\u0631 \u06a9\u06d2 \u0628\u0627\u06c1\u0631 28 \u062c\u0648\u0646 \u06a9\u0648 \u0627\u062d\u062a\u062c\u0627\u062c \u06a9\u0627 \u0627\u0639\u0644\u0627\u0646 nhe udhr tu mqm k gundon ny lagane h, aur andron Sindh ppp ny, bus itna frk hy, hu tu tum sb chor

0 بھارت میں ایک کیشیئر پیٹرول اسٹیشن پر ایک کمرے کے اندر بھارتی کرنسی چیک کر رہا ہے— فائل فوٹو: رائٹرز تیل کی زیادہ قیمتوں سے افراطِ زر کے خدشات کے سبب بھارت کی کرنسی امریکی ڈالر کے مقابلے میں تاریخ کی کم ترین سطح پر آگئی ہے، حالانکہ مرکزی بینک نے وقفے وقفے سے ڈالر کو فروخت کرکے نقصانات کو محدود کرنے میں مدد کی۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے 'رائٹرز' کے مطابق ڈالر کے مقابلے میں بھارتی روپے کی قدر 0.مدثر نذیر Jun 28, 2022 دعا زہرا کی عمرکے تعین کے لئے میڈیکل بورڈ تشکیل دے دیا گیا ہے جب کہ مہدی کاظمی نے تفتیشی افسر کی تبدیلی کے لئے عدالت سے بھی رجوع کرلیا ہے۔ دعا زہرا کے والد سید مہدی کاظمی نے بیٹی دعا زہرا کی عمر کے تعین کے لئے محکمہ صحت کو خط لکھا تھا، جس پر میڈیکل بورڈ تشکیل دے دیا گیا ہے، سیکریٹری صحت نے جوڈیشل مجسٹریٹ کو میڈیکل بورڈ کی تشکیل سے آگاہ کردیا ہے۔ بورڈ کی سربراہی ڈاؤ یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کی پرنسپل پروفیسر صبا سہیل کریں گی جب کہ بورڈ کے دیگر ارکان میں ڈاکٹر سکندر رفیق، ڈاکٹر رانی، پروفیسر نازلی حسین، ڈاکٹر رملہ ناز، پروفیسر شاہ جہاں اور پولیس سرجن بھی شامل ہیں۔ دوسری جانب دعا زہرا کے والد نے تفتیشی افسر کی تبدیلی کے لئے عدالت سے رجوع کرلیا ہے۔ دعا زہرا کے والد نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا ہے کہ موجودہ تفتیشی افسر کا رویہ جانبدارانہ نظر آتا ہے، مدعی مقدمہ اور اہل خانہ کو تفتیشی افسر پراعتماد نہیں۔ درخواست میں مزید کہا گیا ہے کہ انہیں شبہ ہے کہ تفتیشی افسر دعا زہرا کو عمر کے تعین کے لئے پیش ہی نا کرے، عدالت تفتیشی افسر کو تبدیل کرنے اور کسی قابل افسر کو مقرر کرنے کے احکامات جاری کرے۔.منگل کو انٹربینک میں روپے کے مقابلے میں ڈالر کی قدرمیں کمی دیکھی گئی۔ 28 جون کو انٹربینک میں امریکی ڈالر 70 پیسے سستا ہوکر207.0 سری لنکا ان دنوں اپنی تاریخ کے بد ترین معاشی بحران سے گزر رہا ہے—فوٹو:رائٹرز سری لنکا میں سیکیورٹی فورسز نے پیٹرول کے حصول کے لیے قطار میں کھڑے شہریوں میں ٹوکن تقسیم کیے جب کہ ملک میں ایندھن کی شدید قلت کے ساتھ 7 دہائیوں کے دوران اپنے بدترین معاشی بحران کا مقابلہ کرنے والے ملک کے دارالحکومت کولمبو میں اسکول بند کردیے گئے اور سرکاری ملازمین کو گھروں سے کام کرنے کو کہا گیا ہے۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے 'رائٹرز' کی خبر کے مطابق اپنے غیر ملکی زرمبادلہ کے ذخائر ریکارڈ کم ترین سطح پر ہونے کے ساتھ 2 کروڑ 20 لاکھ نفوس پر مشتمل آبادی والا جزیرہ نما ملک خوراک، ادویات اور سب سے زیادہ اہم چیز ایندھن کی ضروری درآمدات کی ادائیگی کے لیے جد وجہد کر رہا ہے۔ 67 سالہ آٹورکشہ ڈرائیور ڈبلیو ڈی شیلٹن کا کہنا تھا کہ میں 4 روز سے لائن میں کھڑا ہوں، اس دوران میں ٹھیک سے سویا نہیں اور نہ ہی صحیح طرح سے کھانا کھایا، ٹوکن وصول کرنے والے شہری کےلیے ایندھن دستیاب ہونے کے بعد اس کو وصول کرنے تک قطار میں اپنی جگہ پر کھڑا رہنا ضروری ہے۔ یہ بھی پڑھیں: سری لنکا روس سے سستا ایندھن خریدنے کی کوششوں میں مصروف کولمبو کے وسط میں واقع ایک فیول اسٹیشن پر 24ویں نمبر پر کھڑے ڈبلیو ڈی شیلٹن کا مزید کہنا تھا کہ ہم کما نہیں سکتے، ہم اپنے خاندانوں کو کھانا نہیں کھلا سکتے۔ ڈبلیو ڈی شیلٹن کا گھر اس فیول اسٹیشن سے سرف 5 کلو میٹر کے فاصلے پر واقع تھا مگر پیٹرول نہ ہونے کے باعث وہ اپنے گھر تک کا سفر نہیں کرسکتا تھا، اس لیے وہیں اسٹیشن پر ٹہر گیا تھا۔ یہ فوری طور پر واضح نہیں ہو سکا کہ حکومت اپنے ایندھن کے ذخائر کو کس حد تک بڑھا سکتی ہے۔ وزیر بجلی و توانائی کنچانا وجیسیکیرا نے گزشتہ روز کہا تھا کہ ہمارے پاس تقریباً 9 ہزار ٹن ڈیزل اور 6 ہزار ٹن پیٹرول کے ذخائر موجود ہیں لیکن مزید کوئی نئی شپمنٹ آنا باقی نہیں ہے۔ مزید پڑھیں: معاشی بحران کے شکار سری لنکا نے آئی ایم ایف سے مذاکرات شروع کردیے حکومت نے ملازمین کو آئندہ نوٹس تک گھر سے کام کرنے کو کہا ہے جب کہ تجارتی دارالحکومت کولمبو اور اس کے اطراف کے علاقوں میں اسکول ایک ہفتے کے لیے بند کر دیے گئے ہیں۔ گزشتہ ہفتے سے فیول اسٹیشن پر پیٹرول کے حصول کے لیے قطاروں میں کافی زیادہ اضافہ ہوا ہے۔ ڈبلیو ڈی شیلٹن نے کہا کہ المیہ یہ ہے کہ ہم نہیں جانتے کہ یہ بحران کب ختم ہوگا۔ یہ بھی پڑھیں: سری لنکا میں پیٹرول کے حصول کیلئے فسادات، فوج کی فائرنگ عوامی سفری سہولیات، بجلی کی پیداوار اور طبی خدمات کو ایندھن کی تقسیم میں ترجیح دی جائے گی جب کہ اس میں سے کچھ حصہ بندرگاہوں اور ہوائی اڈوں کو فراہم کیا جائے گا۔ انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ (آئی ایم ایف) کی ایک ٹیم 3 ارب ڈالر کے بیل آؤٹ پیکج پر بات چیت کے لیے سری لنکا کا دورہ کر رہی ہے۔ اگرچہ سری لنکن قوم جمعرات کو دورہ ختم ہونے سے پہلے ہی آئی ایم ایف ٹیم کے ساتھ قرض کے حصول کے معاہدے تک پہنچنے کی توقع کر رہی ہے لیکن اسٹاف لیول معاہدہ ہونے کے بعد بھی فوری طور پر فنڈز جاری کیے جانے کا امکان نہیں ہے۔.

6 فیصد گر کر 78 روپے 77 پیسے ہو گئی ہے جو کہ تمام تر سابقہ ریکارڈ کو توڑ کر گزشتہ ہفتے 78 روپے 39 پیسے ریکارڈ کی گئی تھی جبکہ اہم ایکوٹی انڈیکس 'نفٹی 50' میں بھی 0.4 فیصد کی کمی ہوئی۔ بھارت اپنی تیل کی ضروریات کا دو تہائی سے زیادہ درآمد کرتا ہے، خام تیل کی بُلند قیمتیں ملکی تجارتی اور کرنٹ اکاؤنٹ خسارے ( سی اے ڈی) میں اضافے اور درآمدی مہنگائی روپے پر دباؤ کا باعث بن رہے ہیں۔ نجی بینک کے سینئر ٹریڈر نے بتایا کہ خام تیل کی قیتمیں دوبارہ بڑھنا شروع ہو گئی ہیں، روپیہ 79 سے 79.50 تک جاسکتا ہے تاہم اس کا انحصار مرکزی بینک کے اس حوالے سے کیے جانے والے اقدامات پر ہوگا۔ یہ بھی پڑھیں: بھارتی روپیہ ڈالر کے مقابلے میں ریکارڈ کم ترین سطح پر پہنچ گیا تیل کی قیمتوں میں تیسرے روز بھی اضافہ ہوا، تیل پیدا کرنے والے بڑے ممالک سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کی جانب سے پیداوار میں اضافے کا امکان نہیں ہے جبکہ لیبیا اور ایکواڈور میں سیاسی بدامنی کے سبب سپلائی میں اضافے سے متعلق خدشات ہیں۔ ڈیلرز نے بتایا کہ بھارت کا مرکزی بینک حکومتی بینکوں کے ذریعے وقفے وقفے سے ڈالر فروخت کررہا ہے تاکہ روپے کو ہونے والے نقصانات کو کم کیا جاسکے لیکن ڈالر کی طلب بہت زیادہ ہے۔ تجزیہ کار نے بتایا کہ عالمی سطح پر ڈالر فنڈنگ میں دباؤ 'لندن انٹر بینک آفر ریٹ ۔ اوورنائٹ انڈیکس سوئیپ' (لائبور-او آئی ایس) میں بڑھتے ہوئے فرق سے صاف ظاہر ہے، بھارتی بینک کے فاروڈ مارکیٹ میں مداخلت نے نقد ڈالر کی قلت کے مسئلے میں اضافہ کر دیا ہے۔ بھارتی مرکزی بینک سسٹم میں روپے کی لیکویڈیٹی کو متاثر کرنے سے بچنے کے لیے فارورڈ ڈالرز فروخت کر رہا ہے، اس کی وجہ سے ایک سال کے فارورڈ ڈالر کا نفع 3فیصد سے نیچے چلا گیا ہے۔ مزید پڑھیں: آئی ایم ایف کے ساتویں، آٹھویں جائزے کیلئے اہداف موصول ہوگئے، مفتاح اسمٰعیل ایم کے گلوبل کے معیشت دان مادھوی اڑوڑا نے بتایا کہ کرنسی مارکیٹ کے کور میں کمی، اشیائے ضروریہ کی مستقل بُلند قیمتیں، محدود زرمبادلہ کے سبب بڑھتی مہنگائی اور بھارتی کرنسی کی قدر کے سبب مرکزی بینک کرنسی مارکیٹ میں مداخلت کی حکمت عملی میں تبدیلی کرسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی کرنسی کو وقت کے ساتھ ساتھ کمزور کرنا درست حکمت عملی ہے جس کے سبب کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ کم ہوگا۔ آنند راٹھی شیئرز اینڈ اسٹاک بروکرز کے محقق جیگار ترویدی نے کہا کہ انہیں لگتا ہے کہ بڑھتے ہوئے شرح سود اور تجارتی و کرنٹ اکاؤنٹ خسارے کے سبب روپے کی قدر کم ہو کر سال کے آخر تک 80 سے 81 روپے ہو جائے گی۔ .3ارب ڈالر موصول ہوگئے ہیں جب کہ آئی ایم ایف سے بھی پروگرام کو حتمی شکل دی جارہی ہے جس کے بعد پاکستان کے لئے کئی اور دروازے بھی کھل جائیں گے،اس تناظر میں ڈالر کی قدر میں اضافے کا کوئی جواز نہیں تاہم ملک بوستان کے مطابق مالی سال ختم ہونے کی وجہ سے غیر ملکی کمپنیاں اپنا منافع باہر منتقل کررہے ہیں۔ انھوں نے مزید کہا کہ اسی طرح دیگر کئی غیر ملکی ادارے بھی پراجیکٹس میں استعمال نہ ہونے والے سرمائے کو منتقل کررہے ہیں جس کی وجہ سے انٹر بینک میں ڈیمانڈ ہے لیکن یہ ڈیمانڈ بھی30جون کو ختم ہوجائے گی جس کے بعد امکان ہے کہ ڈالر تیزی سے نیچے آئے گا۔ ایکس چینج کمپنیز ایسوسی ایشن آف پاکستان کے جنرل سیکرٹری ظفرپراچہ کا کہنا تھا کہ بینک ڈالر کی قدر میں کمی سے گریز کررہے ہیں تاکہ زیادہ سے زیادہ ڈالر کی بلند قدر کا فائدہ اٹھاسکے۔ ظفرپراچہ کے مطابق بینکوں نے کرنسی مارکیٹ کو اسٹاک مارکیٹ بنادیا ہے۔حکومت اور اسٹیٹ بینک کو انٹر بینک میں مصنوعی طور پر ڈالر کی اتار چڑھاوٗ سے روکنے کے لئے اقدامات کرنے چاہیے۔.