\u0627\u0653\u0635\u0641 \u0632\u0631\u062f\u0627\u0631\u06cc \u0646\u06d2 \u06a9\u0633\u06cc \u0645\u0627\u0641\u06cc\u0627 \u06a9\u06d2 \u06af\u0627\u0688\u0641\u0627\u062f\u0631 \u06a9\u06cc \u0637\u0631\u062d \u0633\u0646\u062f\u06be \u06a9\u0648 \u062a\u0628\u0627\u06c1 \u06a9\u0631\u062f\u06cc\u0627\u060c \u0639\u0644\u06cc \u0632\u06cc\u062f\u06cc

23/01/2022 2:29:00 PM

آصف زرداری نے کسی مافیا کے گاڈ فادر کی طرح نے اپنے منشی کو سندھ کا وزیر اعلی بنا رکھا ہے جس نے پورے سندھ کو تباہ کردیا، علی زیدی #PPP #PTIGovernment #SindhGovt #DawnNews مزید پڑھیں:

Ppp, Ptıgovernment

آصف زرداری نے کسی مافیا کے گاڈ فادر کی طرح نے اپنے منشی کو سندھ کا وزیر اعلی بنا رکھا ہے جس نے پورے سندھ کو تباہ کردیا، علی زیدی PPP PTIGovernment SindhGovt DawnNews مزید پڑھیں:

\u0633\u0646\u062f\u06be \u0645\u06cc\u06ba \u06a9\u0631\u0645\u0646\u0644\u0632 \u06a9\u06cc \u06af\u0648\u0631\u0646\u0645\u0646\u0679 \u06c1\u06d2\u060c \u0627\u0646 \u0644\u0648\u06af\u0648\u06ba \u0646\u06d2 \u0633\u0646\u062f\u06be \u067e\u0648\u0644\u06cc\u0633 \u06a9\u0648 \u0627\u067e\u0646\u06cc \u067e\u0631\u0627\u0626\u06cc\u0648\u06cc\u0679 \u0622\u0631\u0645\u06cc \u0628\u0646\u0627 \u0631\u06a9\u06be\u0627 \u06c1\u06d2\u060c \u0639\u0644\u06cc \u0632\u06cc\u062f\u06cc

علی زیدی نے کہا کہ ہم گارنٹی دیتے ہیں کہ 2023 کے انتخابات میں سندھ سے زرداری مافیا کا خاتمہ کردیں گے—فائل فوٹو: ڈان نیوزپاکستان تحریک انصاف سندھ کے صدر اور وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی نے سابق صدر آصف علی زرداری کو سندھ اور پاکستان کا دشمن قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ آصف زرداری نے کسی مافیا کے گاڈ فادر کی طرح نے اپنے منشی کو سندھ کا وزیر اعلی بنا رکھا ہے جس نے پورے سندھ کو تباہ کردیا ہے۔

روہڑی میں پی ٹی آئی رہنما طاہر شاہ کی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم گارنٹی دیتے ہیں کہ 2023 کے انتخابات میں سندھ سے زرداری مافیا کا خاتمہ کردیں گے کیونکہ اب ان کے ساتھ لوگ نہیں ہیں، یہ سندھ کی نمائندگی کا ڈرامہ کرتے ہیں۔پریس کا نفرنس میں وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی کے ہمراہ حلیم عادل شیخ ،امیر بخش بھٹو ،مبین جتوئی و دیگر پی ٹی آئی رہنما بھی موجود تھے۔

مزید پڑھ: DawnNews »

Apki jild ki rangat nikharnay k Liye Hunza Herbal ki masnooat

آپ کی جلد کی رنگت نکھارنے کے لئے Hunza Herbal کی مصنوعات#HunzaHerbal #herbalproducts For Call: 03041111735WhatsApp : 0300-0884844 مزید پڑھ >>

ایمرجنسی نافذ کریں سندھ میں۔ یہاں کوئی لا اینڈ آرڈر نہیں ھے۔ tum khoute jaltey ho qabel CM sindh se بزدار محمود خان کا مراد علی شاہ سے موازنہ توبہ بوبہ علی زیدی بھائی یہاں ہر شہر گاوں قصبہ اور دیہات میں گارڈ فادر رہ رہا ہے جو حکومت کا منہ چڑھا رہا ہے. یہی وہ نظام ہے جسکا آپ اور آپکے ساتھی دفاع کر رہے ہیں. اپنے نام پر غور و فکر کیا کریں اتنی سادگی نا دکھایا کریں.

ڈوب مرو بھکاریو

\u0648\u06c1\u0627\u0628 \u0631\u06cc\u0627\u0636 \u0646\u06d2 \u067e\u0627\u06a9\u0633\u062a\u0627\u0646 \u06a9\u06cc\u0644\u0626\u06d2 \u0645\u0632\u06cc\u062f 3\u0633\u0627\u0644 \u06a9\u06be\u06cc\u0644\u0646\u06d2 \u06a9\u06cc \u062e\u0648\u0627\u06c1\u0634 \u0638\u0627\u06c1\u0631 \u06a9\u0631\u062f\u06cc\u0644\u0627\u06c1\u0648\u0631: \u067e\u0634\u0627\u0648\u0631 \u0632\u0644\u0645\u06cc \u06a9\u06d2 \u06a9\u067e\u062a\u0627\u0646 \u0648\u06c1\u0627\u0628 \u0631\u06cc\u0627\u0636 \u0646\u06d2 \u06a9\u06c1\u0627 \u06c1\u06d2 \u06a9\u06c1 \u0645\u0644\u06a9 \u06a9\u06cc\u0644\u0626\u06d2...

\u0633\u0646\u062f\u06be \u06c1\u0627\u0626\u06cc\u06a9\u0648\u0631\u0679 \u06a9\u06d2 \u0686\u06cc\u0641 \u062c\u0633\u0679\u0633 \u06a9\u06cc \u0633\u067e\u0631\u06cc\u0645 \u06a9\u0648\u0631\u0679 \u0645\u06cc\u06ba \u062a\u0631\u0642\u06cc \u06a9\u06d2 \u062e\u0644\u0627\u0641 \u0642\u0631\u0627\u0631\u062f\u0627\u062f \u0646\u06d2 \u06c1\u0644\u0686\u0644 \u0645\u0686\u0627\u062f\u06cc\u06cc\u06c1 \u0642\u0631\u0627\u0631\u062f\u0627\u062f \u0627\u0633 \u0637\u0631\u062d \u06a9\u06cc \u0627\u06cc\u06a9 \u0633\u0627\u0632\u0634 \u062a\u06be\u06cc \u062c\u06cc\u0633\u06cc \u0633\u0627\u0628\u0642 \u0686\u06cc\u0641 \u062c\u0633\u0679\u0633 \u0633\u062c\u0627\u062f \u0639\u0644\u06cc \u0634\u0627\u06c1 \u06a9\u06d2 \u062e\u0644\u0627\u0641 \u06a9\u06cc \u06af\u0626\u06cc \u062a\u06be\u06cc\u060c \u0631\u06a9\u0646 \u067e\u0627\u06a9\u0633\u062a\u0627\u0646 \u0628\u0627\u0631 \u06a9\u0648\u0646\u0633\u0644

\u0627\u0653\u0635\u0641 \u0632\u0631\u062f\u0627\u0631\u06cc \u0646\u06d2 \u06a9\u0633\u06cc \u0645\u0627\u0641\u06cc\u0627 \u06a9\u06d2 \u06af\u0627\u0688\u0641\u0627\u062f\u0631 \u06a9\u06cc \u0637\u0631\u062d \u0633\u0646\u062f\u06be \u06a9\u0648 \u062a\u0628\u0627\u06c1 \u06a9\u0631\u062f\u06cc\u0627\u060c \u0639\u0644\u06cc \u0632\u06cc\u062f\u06cc\u0633\u0646\u062f\u06be \u0645\u06cc\u06ba \u06a9\u0631\u0645\u0646\u0644\u0632 \u06a9\u06cc \u06af\u0648\u0631\u0646\u0645\u0646\u0679 \u06c1\u06d2\u060c \u0627\u0646 \u0644\u0648\u06af\u0648\u06ba \u0646\u06d2 \u0633\u0646\u062f\u06be \u067e\u0648\u0644\u06cc\u0633 \u06a9\u0648 \u0627\u067e\u0646\u06cc \u067e\u0631\u0627\u0626\u06cc\u0648\u06cc\u0679 \u0622\u0631\u0645\u06cc \u0628\u0646\u0627 \u0631\u06a9\u06be\u0627 \u06c1\u06d2\u060c \u0639\u0644\u06cc \u0632\u06cc\u062f\u06cc

\u0642\u0627\u0646\u0648\u0646 \u0646\u0627\u0641\u0630 \u06a9\u0631\u0646\u06d2 \u0648\u0627\u0644\u06d2 \u0627\u062f\u0627\u0631\u0648\u06ba \u067e\u0631 \u0646\u0638\u0631 \u0631\u06a9\u06be\u0646\u06d2 \u06a9\u06cc\u0644\u0626\u06d2 \u0646\u0626\u06cc \u0627\u0646\u0633\u062f\u0627\u062f \u062f\u06c1\u0634\u062a \u06af\u0631\u062f\u06cc \u067e\u0627\u0644\u06cc\u0633\u06cc \u062a\u06cc\u0627\u0631\u067e\u0627\u0644\u06cc\u0633\u06cc \u06a9\u0648 \u0648\u0641\u0627\u0642\u06cc \u0627\u0648\u0631 \u0635\u0648\u0628\u0627\u0626\u06cc \u062d\u06a9\u0648\u0645\u062a\u0648\u06ba\u060c \u0642\u0627\u0646\u0648\u0646 \u0646\u0627\u0641\u0630 \u06a9\u0631\u0646\u06d2 \u0648\u0627\u0644\u06d2 \u0627\u062f\u0627\u0631\u0648\u06ba\u060c \u0648\u06a9\u0644\u0627 \u0627\u0648\u0631 \u0627\u0642\u0644\u06cc\u062a\u06cc \u0646\u0645\u0627\u0626\u0646\u062f\u0648\u06ba \u0633\u06d2 \u0645\u0634\u0627\u0648\u0631\u062a \u06a9\u06d2 \u0628\u0639\u062f \u0645\u0646\u0638\u0648\u0631 \u06a9\u06cc\u0627 \u06af\u06cc\u0627 \u06c1\u06d2\u06d4

\u06a9\u0648\u0648\u0688 \u06a9\u06cc \u0632\u06cc\u0627\u062f\u06c1 \u0634\u0631\u062d \u0648\u0627\u0644\u06d2 \u062a\u0639\u0644\u06cc\u0645\u06cc \u0627\u062f\u0627\u0631\u0648\u06ba \u06a9\u0648 \u0627\u06cc\u06a9 \u06c1\u0641\u062a\u06d2 \u06a9\u06cc\u0644\u0626\u06d2 \u0628\u0646\u062f \u0631\u06a9\u06be\u0646\u06d2 \u06a9\u0627 \u0641\u06cc\u0635\u0644\u06c1\u0627\u062c\u0644\u0627\u0633 \u0645\u06cc\u06ba \u0645\u0633\u0627\u062c\u062f \u0645\u06cc\u06ba \u0645\u06a9\u0645\u0644 \u0648\u06cc\u06a9\u0633\u06cc\u0646\u06cc\u0679\u0688 \u0627\u0641\u0631\u0627\u062f \u06a9\u0648 \u0646\u0645\u0627\u0632 \u06a9\u06cc\u0644\u0626\u06d2 \u062c\u0627\u0646\u06d2 \u0633\u0645\u06cc\u062a \u062f\u06cc\u06af\u0631 \u067e\u0631\u0648\u0679\u0648\u06a9\u0648\u0644\u0632 \u067e\u0631 \u0639\u0645\u0644 \u062f\u0631\u0622\u0645\u062f \u06a9\u0627 \u0641\u06cc\u0635\u0644\u06c1 \u06a9\u06cc\u0627 \u06af\u06cc\u0627\u060c \u0627\u06cc\u0646 \u0633\u06cc \u0627\u0648 \u0633\u06cc The time of Imam Al-Mahdi and Dajjal (Antichrist). Soon the time will come for the appearance of Dajjal, the events are already happening. Muhammad Qasim’s several visions about the appearance of Dajjal and his chaos.

\u0633\u0639\u0648\u062f\u06cc \u0641\u0648\u062c\u06cc \u0627\u062a\u062d\u0627\u062f \u06a9\u06cc \u06cc\u0645\u0646 \u06a9\u06cc \u062c\u06cc\u0644 \u067e\u0631 \u0641\u0636\u0627\u0626\u06cc \u062d\u0645\u0644\u06d2 \u06a9\u06cc \u062a\u0631\u062f\u06cc\u062f\u0627\u062a\u062d\u0627\u062f\u06cc \u0627\u0641\u0648\u0627\u062c \u06a9\u06d2 \u062a\u0631\u062c\u0645\u0627\u0646 \u0646\u06d2 \u062d\u0648\u062b\u06cc \u0628\u0627\u063a\u06cc\u0648\u06ba \u06a9\u0627 \u062d\u0648\u0627\u0644\u06c1 \u062f\u06cc\u062a\u06d2 \u06c1\u0648\u0626\u06d2 \u06a9\u06c1\u0627 \u06a9\u06c1 \u0645\u0644\u06cc\u0634\u06cc\u0627 \u06a9\u06cc \u062c\u0627\u0646\u0628 \u0633\u06d2 \u06cc\u06c1 \u062f\u0639\u0648\u06d2 \u0628\u06d2 \u0628\u0646\u06cc\u0627\u062f \u0627\u0648\u0631 \u0628\u06d2 \u0628\u0646\u06cc\u0627\u062f \u06c1\u06cc\u06ba\u06d4

0 علی زیدی نے کہا کہ ہم گارنٹی دیتے ہیں کہ 2023 کے انتخابات میں سندھ سے زرداری مافیا کا خاتمہ کردیں گے—فائل فوٹو: ڈان نیوز پاکستان تحریک انصاف سندھ کے صدر اور وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی نے سابق صدر آصف علی زرداری کو سندھ اور پاکستان کا دشمن قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ آصف زرداری نے کسی مافیا کے گاڈ فادر کی طرح نے اپنے منشی کو سندھ کا وزیر اعلی بنا رکھا ہے جس نے پورے سندھ کو تباہ کردیا ہے۔ روہڑی میں پی ٹی آئی رہنما طاہر شاہ کی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم گارنٹی دیتے ہیں کہ 2023 کے انتخابات میں سندھ سے زرداری مافیا کا خاتمہ کردیں گے کیونکہ اب ان کے ساتھ لوگ نہیں ہیں، یہ سندھ کی نمائندگی کا ڈرامہ کرتے ہیں۔ پریس کا نفرنس میں وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی کے ہمراہ حلیم عادل شیخ ،امیر بخش بھٹو ،مبین جتوئی و دیگر پی ٹی آئی رہنما بھی موجود تھے۔ یہ بھی پڑھیں: سندھ حکومت نے جزائر خود وفاق کے حوالے کیے تھے، علی زیدی وفاقی وزیر نے کہا کہ ان لوگوں نے سندھ میں 14 سال میں کچھ نہیں کیا، ان کی کارکردگی عوام کے سامنے ہے ان کو 12 ہزار ارب روپے کے فنڈز ملے یہ بتائیں وہ کہاں خرچ کیے۔ ان کا کہنا تھا کہ ان لوگوں نے سندھ پولیس کو اپنی پرائیویٹ آرمی بنا رکھا ہے، میں سندھ میں جس ضلع میں بھی گیا ہوں وہاں لوگوں نے پولیس کی شکایت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ بات 18ویں ترمیم کی کرتے ہیں مگر بلدیات کا کالا قانون لائے ہیں، اگر یہ قانون واپس نہ لیا گیا تو 27 فروری کو گھوٹکی سے کراچی تک مارچ کریں گے۔ مزید پڑھیں: زرداری بڑی بڑی باتیں کرتے ہیں مگر پنجاب میں ان کے پاس امیدوار نہیں، فواد چوہدری ایک سوال کے جواب میں علی زیدی کا کہنا تھا کہ صدارتی نظام کوئی جادو کی چھڑی نہیں ہے میں نے ایسی کوئی بات نہیں سنی یہ قیاس آرائیاں صرف میڈیا پر چل رہی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ایس ایس پی شکارپور نے اپنی رپورٹ میں بتادیا تھا کہ شکارپور میں کچے کے ڈاکوؤں کو کون کون سپورٹ کرتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سندھ میں کرمنلز کی گورنمنٹ ہے، ان لوگوں نے ناظم جوکھیو کے قاتلوں کو دبئی بھیج دیا، یہ لوگ جس طرح چلانا چاہتے ہیں اس طرح نظام نہیں چلتے۔ یہ بھی پڑھیں: کراچی کمیٹی اجلاس میں تکرار پر وزیراعلیٰ اور علی زیدی کا وزیراعظم کو خط، مداخلت کا مطالبہ ان کا کہنا تھا کہ مہنگائی ساری دنیا میں آئی ہے کورونا کے بعدسے صرف پاکستان میں نہیں آئی ہے یہاں تو سندھ کے گوداموں سے گندم تک غائب ہوجاتی ہے اور کہا جاتا ہے کہ چوہے کھا گئے، چیئرمین نیب نے تو ان دو ٹانگوں والے چوہوں سے گندم کے فراڈ کے پیسے وصول کیے ہیں۔ وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ ان لوگوں سے ملک اور قوم کے مفاد میں کسی بھلائی کی امید نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ میں ہمارے نمائندوں کے انتخابات میں ووٹ ڈبل ٹھپے کی نذر کیے گئے، اس لیے اب ہم ای وی ایم کا استعمال چاہتے ہیں۔ .Comments لاہور: پشاور زلمی کے کپتان وہاب ریاض نے کہا ہے کہ ملک کیلئے کھیلنا ہر کھلاڑی کی خواہش ہوتی ہے، پاکستان کیلئے مزید 3سال کھیل سکتا ہوں۔ ورچوئل پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئےوہاب ریاض نے کہا کہ کورونا وبا کے دوران پی ایس ایل 7 کا انعقاد ایک چیلنج ہے، ایونٹ میں ہماری ٹیم پشاور زلمی مضبوط ہے اور بھرپور جدوجہد کریں گے، سپر لیگ کے مقابلے سخت اور دلچسپ متوقع ہیں۔ وہاب ریاض کا مزیدکہنا تھا کہ آخری وقت میں اسکواڈ میں زیادہ تبدیلیاں کافی چیلنجنگ ہیں، بطور ٹیم ہمارا فوکس صرف جیت پر ہے، ماضی میں فتح کے قریب پہنچ کر ٹرافی نہ جیت سکے، اس سال جیت کیلئے بہت پر امید ہیں۔ پاکستان ٹیم کے پیسر کا ماننا ہے کہ پاکستان سپر لیگ کے اس سیزن میں بھی ٹاس کا کردار اہم ہوگا، پچ کے حساب سے ٹیم تشکیل دیں گے، امید ہے کہ غیر ملکی کھلاڑی بھی ٹیم کو جلد جوائن کرلیں گے، میں بہت جنونی ہوں، اسی لئے آج بھی کرکٹ کھیل رہا ہوں۔ وہاب ریاض نے مزید کہا کہ کورونا سے بچاؤ کیلئےسب کو ایس او پیز پر عمل کرنا ہوگا، مکمل ہوٹل بک ہونا اچھا عمل ہے، حارث، حسنین اور شاہین اچھے بولر ہیں، ان کیلئےنیک خواہشات ہیں مگر میرا کسی نوجوان بولرسے نہیں بلکہ خود سے مقابلہ ہے، بائیو سیکور ببل کا ماحول پچھلے سال کی نسبت بہتر ہے۔.0 قرارداد میں کہا گیا تھا کہ سینیارٹی کے اصول پر عمل کا یہ مطلب نہیں کہ ایک ایسے جج کو ترقی دی جائے جس پر بدتمیزی یا خراب کارکردگی کے الزامات ہوں— فائل فوٹو:پی بی سی ویب سائٹ پاکستان بار کونسل (پی بی سی) کی سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کو سپریم کورٹ میں ترقی دینے کے خلاف منظور کی گئی قرارداد نے ہلچل مچا دی ہے، کونسل میں سندھ سے تعلق رکھنے والے ٓایک رکن نے اس قرارداد کو سندھ سے تعلق رکھنے والے چیف جسٹس کے خلاف ایک سازش قرار دیا ہے۔ ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق ماضی میں جوڈیشل کمیشن آف پاکستان میں بار کونسل کے نمائندے کے طور پر خدمات سر انجام دینے والے محمد یوسف لغاری نے کہا کہ انہوں نے پاکستان بار کونسل کے نومنتخب وائس چیئرمین حفیظ الرحمٰن چوہدری کو دو صفحات پر مشتمل ایک خط لکھ کر ان کی غیر موجودگی میں قرارداد کی منظوری پر افسوس کا اظہار کیا جبکہ وہ چھٹی پر تھے۔ خط میں کہا گیا کہ 'میں نے 21 جنوری (جمعہ) کے اجلاس کے ایجنڈے کو دیکھا جس میں اس طرح کی کسی بات پر غور کرنا شامل نہیں تھا'۔ یہ بھی پڑھیں: سندھ ہائیکورٹ میں قواعد کی ’مکمل تعمیل‘ کے بغیر بھرتیوں کی وضاحت طلب انہوں نے مزید کہا کہ انہیں لگتا ہے کہ یہ قرارداد اس طرح کی ایک سازش تھی جیسی سابق چیف جسٹس سجاد علی شاہ کے خلاف کی گئی تھی، جس کے بعد انہیں سپریم کورٹ نے اعلیٰ جج کے طور پر کام کرنے سے روک دیا تھا۔ جمعہ کو پاکستان بار کونسل کے وائس چیئرمین کے انتخاب کے فوراً بعد ایوان نے ایک قرارداد منظور کی اور میڈیا کو پریس ریلیز جاری کی جس میں ہائی کورٹ میں معاون قانونی عملے کی تعیناتیوں میں مبینہ بے ضابطگی سے متعلق زیر التوا کیس اور سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس احمد علی ایم شیخ کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں دائر ریفرنس کا فیصلہ ہونے تک ان کی سپریم کورٹ میں ترقی کی مخالفت کی گئی تھی۔ پاکستان بار کونسل کی قرارداد میں کہا گیا کہ ججوں کی ترقی کے لیے سینیارٹی کے اصول، آئین کی بالادستی، قانون کی حکمرانی اور عدلیہ کی آزادی پر عمل کیا جانا چاہیے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ ایک ایسے جج کو ترقی دی جائے جو بے ضابطگی یا خراب کارکردگی کے الزامات کا سامنا کررہا ہو، بالخصوص سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کی ترقی کے معاملے میں کہ جو اپنے رجسٹرار کے توسط سے اپنی نگرانی میں سندھ کے کچھ اضلاع میں معاون قانونی عملے کی تعیناتی سے متعلق سنگین الزامات کا سامنا کررہے ہیں۔ مزید پڑھیں: عمر عطا بندیال باضابطہ طور پر ملک کے اگلے چیف جسٹس مقرر قرارداد پر سندھ ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن اور کراچی بار ایسوسی ایشن کی جانب سے تنقید کی گئی، جنہوں نے جمعہ کو بلائے گئے ایک ہنگامی اجلاس میں اس بیان پر سخت مؤقف لیا اور دعویٰ کیا کہ یہ پوری کونسل کا نہیں بلکہ صرف پاکستان بار کونسل کے وائس چیئرمین کا ذاتی نقطہ نظر تھا۔ سندھ ہائی کورٹ بار ایوسی ایشن اور کراچی بار ایسوسی ایشن کی مشترکہ قرارداد میں ان الزامات کو بھی مسترد کر دیا کہ سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس نے صوبائی عدلیہ میں کوئی غیر قانونی تعیناتیاں کیں۔ انہوں نے پاکستان بھر کی تمام بارز سے پاکستان بار کونسل کے مبینہ بیان کے ساتھ ساتھ بار کونسل کی ایگزیکٹو کمیٹی کے چیئرمین کی جانب سے چیف جسٹس گلزار احمد کو سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس سے متعلق ارسال کردہ خط کی مذمت کرنے کا بھی مطالبہ کیا۔ مشترکہ قرارداد میں یاددہانی کروائی گئی کہ ایسوسی ایشن نے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کے خلاف توہین آمیز مہم پر اصولی مؤقف اختیار کیا تھا اور وہ چیف جسٹس احمد علی ایم شیخ جیسے آزاد سوچ رکھنے والے ججز کے ساتھ کھڑے رہیں گے جن کی دیانتداری ناقابلِ مواخذہ تھی۔ یہ بھی پڑھیں: جسٹس عائشہ ملک کی تعیناتی: ’سینیارٹی قانونی تقاضا نہیں‘ قرارداد میں پاکستان بار کونسل سے یہ بھی مطالبہ کیا گیاکہ وہ اپنے وائس چیئرمین کی عہدے کا غلط استعمال کرنے اور ایک غیر مجاز پریس ریلیز جاری کرنے پر سرزنش کرے۔ اب پاکستان بار کونسل کے رکن محمد یوسف لغاری نے اپنے دو صفحات پر مشتمل خط میں سوال کیا کہ کیا اسی طرح ججوں کے خلاف قراردادیں منظور کی جاتی ہیں؟ انہوں نے دعویٰ کیا کہ ہائی کورٹ کے بعض ججز کے خلاف بہت سی شکایات ہیں لیکن ایسی قرارداد جو مبینہ طور پر ذاتی پسند اور ناپسند پر مبنی ہے، صرف ایک پنڈورا باکس ہی کھولے گی۔ قراداد میں مزید کہا گیا کہ کونسل کی جانب سے جاری کردہ پریس ریلیز پاکستان بار کونسل، سندھ بار کونسل اور سندھ ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے اس مؤقف کے برعکس ہے جس کے تحت انہوں نے سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کو ان کی سنیارٹی کی وجہ سے ترقی دینے کا مطالبہ کیا تھا۔ مزید پڑھیں: چیف جسٹس سے سپریم کورٹ کیلئے نامزدگی کا طریقہ کار طے کرنے کی درخواست انہوں نے لکھا کہ یہ 24 نومبر 2021 کو ہونے والے پاکستان بار کونسل کے اجلاس میں کیے گئے فیصلوں کے بھی خلاف تھا جہاں وائس چیئرمین کے اعتراضات پر غور کیا گیا تھا۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ کونسل کی ایگزیکٹو کمیٹی کا اختیار نہیں کہ وہ کمیٹی کے ایک رکن ریاضت علی سحر کی درخواست پر چیف جسٹس آف پاکستان کو سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس کے خلاف خط لکھے۔ محمد یوسف لغاری نے اپنے خط میں یاد دلایا کہ طویل بحث کے بعد معاملہ دوبارہ ایگزیکٹو کمیٹی کے پاس ایک نئے فیصلے کے لیے بھیج دیا گیا تھا اور جہاں تک ان کے علم میں ہے اس معاملے پر دوبارہ غور کرنے کے لیے کمیٹی کا کوئی اجلاس منعقد نہیں ہوا۔ خط میں یہ سوال بھی اٹھایا گیا ہے کہ جب یہ معاملہ سپریم کورٹ میں زیر سماعت ہے تو وکلا برادری کی اعلیٰ تنظیم یہ کیسے کہہ سکتی ہے کہ جج نے وکلا کے ساتھ بدتمیزی کی؟ اس کے علاوہ سندھ ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن نے پہلے ہی قرار دے چکی ہے کہ سندھ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس ایک ایماندار، آزاد اور قابل جج ہیں۔ اپنے خط میں یوسف لغاری نے جمعہ کو جاری کردہ اپنی مشترکہ قرارداد میں سندھ ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن اور کراچی بار ایسویسی ایشن کے مؤقف کی بھی حمایت کی۔.0 علی زیدی نے کہا کہ ہم گارنٹی دیتے ہیں کہ 2023 کے انتخابات میں سندھ سے زرداری مافیا کا خاتمہ کردیں گے—فائل فوٹو: ڈان نیوز پاکستان تحریک انصاف سندھ کے صدر اور وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی نے سابق صدر آصف علی زرداری کو سندھ اور پاکستان کا دشمن قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ آصف زرداری نے کسی مافیا کے گاڈ فادر کی طرح نے اپنے منشی کو سندھ کا وزیر اعلی بنا رکھا ہے جس نے پورے سندھ کو تباہ کردیا ہے۔ روہڑی میں پی ٹی آئی رہنما طاہر شاہ کی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم گارنٹی دیتے ہیں کہ 2023 کے انتخابات میں سندھ سے زرداری مافیا کا خاتمہ کردیں گے کیونکہ اب ان کے ساتھ لوگ نہیں ہیں، یہ سندھ کی نمائندگی کا ڈرامہ کرتے ہیں۔ پریس کا نفرنس میں وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی کے ہمراہ حلیم عادل شیخ ،امیر بخش بھٹو ،مبین جتوئی و دیگر پی ٹی آئی رہنما بھی موجود تھے۔ یہ بھی پڑھیں: سندھ حکومت نے جزائر خود وفاق کے حوالے کیے تھے، علی زیدی وفاقی وزیر نے کہا کہ ان لوگوں نے سندھ میں 14 سال میں کچھ نہیں کیا، ان کی کارکردگی عوام کے سامنے ہے ان کو 12 ہزار ارب روپے کے فنڈز ملے یہ بتائیں وہ کہاں خرچ کیے۔ ان کا کہنا تھا کہ ان لوگوں نے سندھ پولیس کو اپنی پرائیویٹ آرمی بنا رکھا ہے، میں سندھ میں جس ضلع میں بھی گیا ہوں وہاں لوگوں نے پولیس کی شکایت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ بات 18ویں ترمیم کی کرتے ہیں مگر بلدیات کا کالا قانون لائے ہیں، اگر یہ قانون واپس نہ لیا گیا تو 27 فروری کو گھوٹکی سے کراچی تک مارچ کریں گے۔ مزید پڑھیں: زرداری بڑی بڑی باتیں کرتے ہیں مگر پنجاب میں ان کے پاس امیدوار نہیں، فواد چوہدری ایک سوال کے جواب میں علی زیدی کا کہنا تھا کہ صدارتی نظام کوئی جادو کی چھڑی نہیں ہے میں نے ایسی کوئی بات نہیں سنی یہ قیاس آرائیاں صرف میڈیا پر چل رہی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ایس ایس پی شکارپور نے اپنی رپورٹ میں بتادیا تھا کہ شکارپور میں کچے کے ڈاکوؤں کو کون کون سپورٹ کرتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سندھ میں کرمنلز کی گورنمنٹ ہے، ان لوگوں نے ناظم جوکھیو کے قاتلوں کو دبئی بھیج دیا، یہ لوگ جس طرح چلانا چاہتے ہیں اس طرح نظام نہیں چلتے۔ یہ بھی پڑھیں: کراچی کمیٹی اجلاس میں تکرار پر وزیراعلیٰ اور علی زیدی کا وزیراعظم کو خط، مداخلت کا مطالبہ ان کا کہنا تھا کہ مہنگائی ساری دنیا میں آئی ہے کورونا کے بعدسے صرف پاکستان میں نہیں آئی ہے یہاں تو سندھ کے گوداموں سے گندم تک غائب ہوجاتی ہے اور کہا جاتا ہے کہ چوہے کھا گئے، چیئرمین نیب نے تو ان دو ٹانگوں والے چوہوں سے گندم کے فراڈ کے پیسے وصول کیے ہیں۔ وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ ان لوگوں سے ملک اور قوم کے مفاد میں کسی بھلائی کی امید نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ میں ہمارے نمائندوں کے انتخابات میں ووٹ ڈبل ٹھپے کی نذر کیے گئے، اس لیے اب ہم ای وی ایم کا استعمال چاہتے ہیں۔.