’’آپ توانائی نہیں مہنگائی کے وزیر ہیں‘‘، لوڈ شیڈنگ پر حکومتی اتحادی برہم - ایکسپریس اردو

’’اْپ توانائی نہیں مہنگائی کے وزیر ہیں‘‘، لوڈ شیڈنگ پر حکومتی اتحادی برہم -

04/07/2020 6:49:00 PM

’’اْپ توانائی نہیں مہنگائی کے وزیر ہیں‘‘، لوڈ شیڈنگ پر حکومتی اتحادی برہم -

جی ڈی اے کا کے الیکٹرک کی اجارہ داری ختم کرنے کا مطالبہ ، عوامی احتجاج میں شریک ہونے کا اشارہ دے دیا

کراچی: گورنر ہاؤس میں وفاقی وزیر توانائی عمر ایوب کے ساتھ ویڈیو لنک پراجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی جس کے مطابق حکومت کی اتحادی گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے رہنماؤں نے کراچی میں بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ پر شدید تنقید کی اور کے الیکٹرک کی اجارہ داری ختم کرنے کے لئے دیگر ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کے تقرر کا مطالبہ کیا۔

شجر کاری مہم: ’یہ شروعات ہیں، ابھی ایک لمبی جنگ چلے گی‘ - BBC News اردو گلوکار بلال سعید نے مسجد میں گانے کی ریکارڈنگ پر معافی مانگ لی - ایکسپریس اردو ایک بار نہیں 10مرتبہ بلانے پر بھی نیب جائیں گے، وزیر اعلیٰ پنجاب - ایکسپریس اردو

ذرائع کے مطابق جی ڈی اے رہنماوں نے بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کے خلاف شکایات کے انبار لگا دیے۔ جی ڈی اے رہنماؤں نے بدترین لوڈشیڈنگ، اوور بلنگ، کے الیکٹرک انتظامیہ کے غیر ذمہ دارانہ سلوک پر شدید برہمی کا اظہار بھی کیا اور کہا کہ بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کی نااہلی اور بدعنوانی کا عمل جی ڈی اے کو سڑکوں پر احتجاج کرنے والے عوام کے ساتھ کھڑا ہونے پر مجبور کردے گا۔

جی ڈی اے رہنماؤں نے واضح کیا کہ بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ اور اوور بلنگ کی صورت حال پی ٹی آئی کے ساتھ جی ڈی اے کے اتحاد کو کمزور کرسکتی ہے۔ رہنماؤں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی حکومت تاحال کوئی تبدیلی نہیں لاسکی عوام شدید کرب کا شکار ہیں۔ذرائع کے مطابق جی ڈی اے رہنماؤں نے اجلاس میں کہا کہ اب بھی پیپلزپارٹی رہنما خورشید شاہ کے حواریوں کے ذریعے سیپکو اور ہیسکو کا انتظام چل رہا ہے کے الیکٹرک کراچی کے شہریوں کی کھال اُتارنے کے ساتھ انہیں ذہنی اذیت سے دوچار کر رہی ہےاور کوئی اس پر قابو نہیں پاسکتا۔

ذرائع کے مطابق ترجمان جی ڈی اے سردار رحیم نے وفاقی وزیر توانائی عمر ایوب کو اجلاس میں کہا کہ وہ” وفاقی وزرات مہنگائی اور عوامی ازیت” کے وزیر ہیں انہوں نے واضح کیا کہ یہ حساس وزارت ہے وزارت پانی و بجلی حکومت بنا اور گرا سکتی ہے۔ جی ڈی اے کی جانب سے طویل احتجاج اور گفتگو کے بعد وفاقی وزیر بجلی عمر ایوب نے حیسکو اور سیپکو کے سربراہان کو ایک ہفتے کے اندر شکایات کا جائزہ لے کر انہیں حل کرنے کا حکم دیا اور گورنر ہاؤس سے اس سے متعلق آنے والی تمام شکایات کو نمٹانے کی بھی ہدایت کی اور 15 دنوں کے اندر بہتر کارکردگی کا مظاہرہ نہ کرنے والے عملے کو برطرف کرنے کی ہدایت کی۔

یہ بھی پڑھیے:ملک میں بجلی کی طلب 23527 اور پیداوار 25 ہزار میگاواٹ ہے، وزارت توانائیجی ڈی اے کی جانب سے وفاقی وزیر سے درخواست کی گئی کہ نیپرا میں سندھ کے ممبر کو تبدیل کرنے کے بعد نیپرا کے ذریعے کے الیکٹرک کو کنٹرول کیا جائے اور کے الیکٹرک کی اجارہ داری کو ختم کرنے کے لئے کراچی میں دیگر ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کا بھی تقرر کیا جائے۔

مزید پڑھ: Express News »

چین کے ساتھ کشیدگی کے دوران نریندر مودی کے لیہ دورے کے کیا معنی ہے؟چین اور انڈیا کی فوجوں کے درمیان 15 اور 16 جون کی درمیان شب دست بدست لڑائی میں 20 انڈین فوجیوں کی ہلاکت کے بعد جمعہ کو وزیر اعظم نریندر مودی نے لداخ کے علاقہ لیہ کا اچانک دورہ کیا۔

شادی شدہ خاتون کا ’جِن‘ نکالنے کے بہانے اس کے ساتھ جنسی زیادتینئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں ایک جعلی بابے نے ’جن‘ نکالنے کے بہانے شادی شدہ لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بناڈالا۔ انڈیا ٹائمز کے مطابق اس

تھوک کے علاوہ گیند چمکانے کا کوئی متبادل طریقہ ہوسکتا ہے؟ وقار یونس کا اہم بیانتھوک کے علاوہ گیند چمکانے کا کوئی متبادل طریقہ ہوسکتا ہے؟ وقار یونس کا اہم بیان ARYNewsUrdu

'نیشنل پارکس کے ذریعے قدرتی ماحول کا تحفظ اور روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے'اسلام آباد : مشیر ماحولیات ملک امین اسلم کا کہنا ہے کہ نیشنل پارکس کے ذریعے قدرتی ماحول کا تحفظ اور روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے

پاکستان کا دفاع ہر قیمت پر کیاجائے گا، قومی سلامتی اجلاس کے شرکا کا عزماسلام آباد : وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت قومی سلامتی کے اجلاس میں شرکا نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر سخت اظہار تشویش کرتے ہوئے عزم کا اعادہ کیا کہ پاکستان کا دفاع ہر قیمت پر کیا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت قومی سلامتی سے متعلق …

جنوبی پنجاب کے صوبے کے خواب کی آج عملی تعبیر کا آغاز ہوچکا، شاہ محمودملتان : شاہ محمود قریشی نے جنوبی پنجاب کے حوالے کہا کہ این ایف سی کی طرح پرونشل فنانس ایوارڈ بھی انتہائی ضروری ہے، اب ماضی کی طرح جنوبی پنجاب کے فنڈز دوسری مد میں خرچ نہیں ہوں گے۔