54 برس پرانے انڈین اخبار فرانسیسی پہاڑوں سے ملنے کا معمہ

فرانسیسی پہاڑوں سے ملنے والے ’انڈین اخبار 1966 میں تباہ ہونے والے طیارے سے گرے تھے‘

13/07/2020 8:22:00 PM

فرانسیسی پہاڑوں سے ملنے والے ’انڈین اخبار 1966 میں تباہ ہونے والے طیارے سے گرے تھے‘

انڈیا کے 1966 کے اخبار فرانسیسی پہاڑی سلسلے ایلپس کے پگھلنے والے گلیشیئر سے ملے ہیں اور خیال یہ ہے کہ یہ اخبارات اس جہاز سے گرے ہوں گے جو 24 جنوری 1966 میں اسی پہاڑی سلسلے میں گر کر تباہ ہو گیا تھا۔

انھوں نے کہا کہ جب یہ اخبارات سوکھ جائیں گے تو وہ انھیں یادگار کے طور پر اپنے ریسٹورانٹ میں آویزاں کریں گے۔یہ پہلا موقع نہیں کہ انڈیا کے 1966 میں تباہ ہونے والے طیارے کی اشیا مقامی لوگوں کے ہاتھ لگی ہیں۔سنہ 2013 میں ہیرے جواہرات کا ایک باکس بھی ملا تھا جس کی مجموعی مالیت تین لاکھ 76 ہزار ڈالر لگائی گئی تھی۔

اداکارہ آمنہ شیخ نے دوسری شادی کرلی؟ - ایکسپریس اردو غیر ملکی سفیر بھی وزیراعظم کی شجر کاری مہم کا حصہ بن گئے مسجد میں گانے کی ویڈیو پر صبا قمر اور بلال سعید کو معافی کیوں مانگنا پڑی؟ - BBC News اردو

تصویر کے کاپی رائٹAFPImage captionٹموتھی موٹن کا ریسٹورانٹ شمونی سکی ریزوٹ کے قریب ہے اور انھوں نے خبررساں ادارے اے ایف پی کو بتایا ہے کہ وہ ان اخبارات کو سکھا رہے ہیں لیکن وہ اچھی حالت میں ہیں اور انھیں باآسانی پڑھا جا سکتا ہےعالمی حدت میں اضافے کی وجہ سے دنیا بھر میں گلیشیئرز پگھل رہے ہیں۔ گذشتہ برس ستمبر میں ماہرین نے اس خدشے کا اظہار کیا تھا کہ مونٹ بلانک کے پلانپینو گلیشیئر کو خطرات لاحق ہو چکے ہیں اور وہ کسی بھی وقت گر سکتا ہے۔

انڈیا کا تباہ ہونے والا طیارہ 24 جنوری 1966 میں موجودہ ممبئی اور اس وقت کے بمبئی سے لندن آ رہا تھا جب وہ مونٹ بلانک کی چوٹی کے قریب تباہ ہوا تھا۔بمبئی سے اڑنے والا طیارہ لندن آتے ہوئے پہلے نئی دہلی اور پھر بیروت میں رکا تھا۔ لندن پہنچنے سے پہلے اسے سوئٹرزلینڈ کے شہر جنیوا میں بھی رکنا تھا۔ جب وہ جنیوا کے ہوائی اڈے پر اترنے کے لیے نیچے آ رہا تھا تو وہ پہاڑ سے ٹکرا گیا جس میں عملے کے 11 اراکین اور 106 مسافر ہلاک ہو گئے تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹGetty ImagesImage captionاندرا گاندھی کا قتل امرتسر میں سکھوں کے مقدس مقام دربار صاحب پر ہونے والے بلیو سٹار نامی ملٹری آپریشن کے بعد ہوا تھااندرا گاندھی کون تھیں؟اندرا گاندھی آزاد انڈیا کے پہلے وزیر اعظم جواہر لعل نہرو کی بیٹی تھیں۔ اندرا گاندھی 15 برس تک برسراقتدار رہیں اور جب وہ پہلی بار وزیر اعظم منتخب ہوئیں تو وہ دنیا کی پہلی خاتون وزیر اعظم تھیں۔ وہ اپنے والد جواہر لعل نہرو کے بعد انڈیا کی سب سے لمبے عرصے تک وزیر اعظم رہیں۔

ان کا پہلا دور 1966 میں شروع ہوا جو گیارہ برس تک رہا۔ جب انھوں نے1975 میں ایمرجنسی کا نفاذ کیا تو ان کی مقبولیت کا گراف گر گیا۔ جب انھوں نے انتخابات کا اعلان کیا تو وہ اپنی سیٹ بھی ہار گئیں۔اندرا گاندھی دوسری بار 1980 میں وزیر اعظم منتخب ہوئیں۔ انھیں 1984 میں ایک سکھ باڈی گارڈ نے گولی مار کر ہلاک کر دیا تھا۔

اندرا گاندھی کا قتل امرتسر میں سکھوں کے مقدس مقام دربار صاحب پر ہونے والے بلیو سٹار نامی ملٹری آپریشن کے بعد ہوا تھا۔ مزید پڑھ: BBC News اردو »

روزنامہ دنیا :- پاکستان:-عوام کو حکومت سے زیادہ اپوزیشن کے غیرفعال رہنے سے شکوہ

ماں باپ سے لڑکر گھر سے بھاگنے والی لڑکی زیادتی کے بعد قبل لاش مل گئیماسکو(مانیٹرنگ ڈیسک) روس میں ماں باپ کے ساتھ جھگڑ کر گھر سے بھاگ جانے والی 8سالہ بچی کو جنسی زیادتی کے بعد قتل کر دیا گیا۔ میل آن لائن کے مطابق اس بچی کا نام

’ول سمتھ سے علیحدگی کے دوران میرے ایک ریپر سے تعلقات رہے‘: جاڈا پنکیٹامریکی اداکارہ، گلوکارہ اور نغمہ نگار جاڈا پنکیٹ سمتھ نے اپنے شوہر اور معروف ہالی وڈ اداکار ول سمتھ کے ساتھ ایک چیٹ شو ’دل سے دل کی بات‘ کے دوران یہ انکشاف کیا ہے کہ ان کا گلوکار آگسٹ السینا کے ساتھ رشتہ قائم رہا ہے۔

کورونا سے دنیا کے 5 لاکھ 71ہزار سے زائد افراد ہلاکدنیا بھر میں کورونا وائرس کی موذی وباء نے مسلسل اپنے پنجے گاڑ رکھے ہیں، جس کے ناصرف مریضوں میں بلکہ اس سے اموات میں بھی ہر روز اضافہ ہو رہا ہے۔

رجب طیب اردگان کے فیصلے سے خلافت عثمانیہ کے دور کی یاد تازہ ہوگئی، پرویز الہیٰرجب طیب اردگان کے فیصلے سے خلافت عثمانیہ کے دور کی یاد تازہ ہوگئی، پرویز الہیٰ ARYNewsUrdu

کرۂ ارض کے سب سے زیادہ فعال آتش فشاں کے زیرِ اثر زندگی کیسی ہے؟سِسیلی کی روز مرہ زندگی ماؤنٹ ایٹنا کے زیر اثر رہتی ہے۔ یہاں کے شہریوں کے لیے اس کے سایے میں زندگی ایک پیچیدہ اور جذباتی عمل ہے۔