10سے 12 روز میں پاکستان واپسی یقینی ہے:اسحاق ڈار

28/06/2022 11:40:00 PM

10سے 12 روز میں پاکستان واپسی یقینی ہے:اسحاق ڈار #IshaqDar @MIshaqDar50 @pmln_org

Ishaqdar

10سے 12 روز میں پاکستان واپسی یقینی ہے:اسحاق ڈار IshaqDar MIshaqDar50 pmln_org

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما اسحاق ڈار نے اس بات کی تصدیق کردی ہے کہ وہ پاکستان واپس آنے کی تیاری کر رہے ہیں اور واپس آکر سینیٹر کے عہدے کا حلف اٹھائیں

گے۔برطانوی نشریاتی ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے اسحاق ڈار نے کہا کہ اگلے ماہ پاکستان واپسی کی تیاری کر رہا ہوں، سینیٹر کا حلف اٹھاؤں گا، اگلے ماہ پاکستان واپسی کا ارادہ تقریباً کنفرم ہے، صحت کو درپیش چند مسائل کا علاج اگلے 10 سے 12 روز میں مکمل ہونے کی توقع ہے۔اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ ڈاکٹرز  اگلے چند روز میں علاج کے مکمل ہونے کے بارے میں پُرامید ہیں، پاکستان میں عمران نیازی کی جانب سے دائر کیا جانے والا کیس جعلی مقدمہ ہے، کیس میرے ٹیکس ریٹرنز پر بنایا گیا،ٹیکس ریٹرنز جمع کرانےمیں کبھی تاخیر نہیں کی۔اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ کیس میں جان ہی نہیں تھی اس لیے انٹرپول نے مجھے کلین چِٹ دے دی تھی، میرے وزیر خزانہ کا قلمدان سنبھالنے سے متعلق  فیصلہ پارٹی اور قیادت کا ہوگا۔ .بیان میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ مجھے نہیں معلوم کہ اسحاق ڈار وطن واپس آرہے ہیں، اگر وہ آرہے ہیں تو ان کی وطن واپسی پارٹی سطح کا فیصلہ نہیں اسحاق ڈار کا اپنا فیصلہ ہے۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپسی کا فیصلہ کریں یہ ان کا فیصلہ ہوگا، پاکستان اسحاق ڈار کا ملک ہے اور وطن واپسی ان کا حق ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپس آنا چاہیں انہیں کوئی نہیں روک سکتا۔.(فوٹو : فائل /ایکسپریس) اسلام آباد:  مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ اسحاق ڈار اگر وطن واپس آرہے ہیں تو یہ ان کا ذاتی فیصلہ ہے پارٹی سطح کا فیصلہ نہیں۔ اپنے بیان میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ مجھے نہیں معلوم کہ اسحاق ڈار وطن واپس آرہے ہیں، اگر وہ آرہے ہیں تو ان کی وطن واپسی پارٹی سطح کا فیصلہ نہیں اسحاق ڈار کا اپنا فیصلہ ہے۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپسی کا فیصلہ کریں یہ ان کا فیصلہ ہوگا، پاکستان اسحاق ڈار کا ملک ہے اور وطن واپسی ان کا حق ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپس آنا چاہیں انہیں کوئی نہیں روک سکتا۔.28 جون 2022 سیکرٹری پاکستان ہاکی فیڈریشن آصف باجوہ نے کہا ہے کہ پاکستان ہاکی کاسب سےبڑامسئلہ پیسے کا ہے۔ ایک بیان میں سیکریٹری پی ایچ ایف نے کہا کہ ہاکی ٹیم کی کارکردگی فیڈریشن کی محنت کی وجہ سےہے ایشیاکپ میں ایک میچ میں 12 کھلاڑیوں کو کھلانےکا ایشو سامنے آیا ہیڈکوچ نےذمہ داری لی،کون کب گراؤنڈ میں جائے گا؟ آصف باجوہ نے کہا کہ انکوائری کمیٹی اس معاملےکی تحقیقات کررہی ہے میں سمجھتاہوں کہ یہ ایک انسانی غلطی تھی۔ ان کا کہنا تھا کہ ڈیلز کا مسئلہ تھاجورکی ہوئی تھیں اب ایشیاکپ کی ڈیلیزدیدی گئی ہیں خواجہ جنید نے زبردست کام کیا ہے وہ شاندار مینجر رہے لیکن خواجہ جنیدکامن ویلتھ گیمزکیلئےمنیجرنہیں ہوں گے کوچ کے ویزے کا مسئلہ آ رہا ہے ویزہ جاری ہونےمیں تاخیرٹیکنیکل وجوہات ہیں۔.

مزید پڑھ:
Waqtnews »

Tonight With Mona Alam | 30 November 2022 | AbbTakk

#abbtakk #tonightwithmonalam #kpk #punjab #imrankhan Tonight With Mona Alam | 30 November 2022 | AbbTakkWelcome to AbbTakk’s Official Channel where we bring ... مزید پڑھ >>

وطن واپسی اسحاق ڈار کا ذاتی فیصلہ ہے , انہیں کوئی نہیں روک سکتا: شاہد خاقاناسلام آباد: مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ اسحاق ڈار اگر وطن واپس آرہے ہیں تو یہ ان کا ذاتی فیصلہ ہے پارٹی سطح کا فیصلہ نہیں۔اپنے

وطن واپسی اسحاق ڈار کا ذاتی فیصلہ ہے پارٹی سطح کا نہیں، شاہد خاقان - ایکسپریس اردویہ اسحاق ڈار کا وطن ہے اور واپسی ان کا حق ہے اس لیے انہیں آنے سے کوئی نہیں روک سکتا، سابق وزیراعظم Ji bilkul Aany do nawaz shareef ko b sath ly k aay ..khan intzar kar raha hy ... گھٹیا ترین وزیر اعظم شاھد گ ا ن ڈ و

'پاکستان ہاکی کا سب سے بڑا مسئلہ پیسے کا ہے'‘پاکستان ہاکی کا سب سے بڑا مسئلہ پیسے کا ہے’ arynewsurdu کرکٹ کی وجہ سے ہاکی اور دیگر کھیلوں اور کھلاڑیوں کو برباد کر دیا گیا۔ کرپشن ھے وہ ہی چند لوگ ہیں جو ہر بار گھوم پھر کر عہدے پکڑ لیتے ہیں

خوشی کی بات ہے ہم پاکستان کپ جیتے: یاسر شاہ

پاکستان میں تمام مذاہب کا احترام کیا جاتا ہے: آرمی چیفku apka kon sa hai 🫣 APKA KONSA MAZHAB HAI? اور تمام مذاہب کے لوگ تم پر لعنتیں بھیج رہے ہیں اس وقت ۔۔۔ تیری شکل سے نفرت ہو گئی ہے پاکستان کے دشمن ہماری نسلوں کے مستقبل کے دشمن 😡😡

پاکستان تمام مذاہب کا احترام کرتا ہے آرمی چیفوفد نے میجر جنرل سیلیا جے ہاروی کی سربراہی میں جی ایچ کیو کا دورہ کیا اور آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی پاکستان کے فوجی افسرروں کی شکل پر لعنت الحَمْدُ ِلله پوری دنیا ان کتوں پر دن رات لعنت پر لعنت بہج رہی ھے الحَمْدُ ِلله پاکستان کے خاص غدار ہیں یہ فوجی افسر ہاے ماشاءاللہ

گے۔برطانوی نشریاتی ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے اسحاق ڈار نے کہا کہ اگلے ماہ پاکستان واپسی کی تیاری کر رہا ہوں، سینیٹر کا حلف اٹھاؤں گا، اگلے ماہ پاکستان واپسی کا ارادہ تقریباً کنفرم ہے، صحت کو درپیش چند مسائل کا علاج اگلے 10 سے 12 روز میں مکمل ہونے کی توقع ہے۔اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ ڈاکٹرز  اگلے چند روز میں علاج کے مکمل ہونے کے بارے میں پُرامید ہیں، پاکستان میں عمران نیازی کی جانب سے دائر کیا جانے والا کیس جعلی مقدمہ ہے، کیس میرے ٹیکس ریٹرنز پر بنایا گیا،ٹیکس ریٹرنز جمع کرانےمیں کبھی تاخیر نہیں کی۔اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ کیس میں جان ہی نہیں تھی اس لیے انٹرپول نے مجھے کلین چِٹ دے دی تھی، میرے وزیر خزانہ کا قلمدان سنبھالنے سے متعلق  فیصلہ پارٹی اور قیادت کا ہوگا۔ .بیان میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ مجھے نہیں معلوم کہ اسحاق ڈار وطن واپس آرہے ہیں، اگر وہ آرہے ہیں تو ان کی وطن واپسی پارٹی سطح کا فیصلہ نہیں اسحاق ڈار کا اپنا فیصلہ ہے۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپسی کا فیصلہ کریں یہ ان کا فیصلہ ہوگا، پاکستان اسحاق ڈار کا ملک ہے اور وطن واپسی ان کا حق ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپس آنا چاہیں انہیں کوئی نہیں روک سکتا۔.(فوٹو : فائل /ایکسپریس) اسلام آباد:  مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ اسحاق ڈار اگر وطن واپس آرہے ہیں تو یہ ان کا ذاتی فیصلہ ہے پارٹی سطح کا فیصلہ نہیں۔ اپنے بیان میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ مجھے نہیں معلوم کہ اسحاق ڈار وطن واپس آرہے ہیں، اگر وہ آرہے ہیں تو ان کی وطن واپسی پارٹی سطح کا فیصلہ نہیں اسحاق ڈار کا اپنا فیصلہ ہے۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپسی کا فیصلہ کریں یہ ان کا فیصلہ ہوگا، پاکستان اسحاق ڈار کا ملک ہے اور وطن واپسی ان کا حق ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسحاق ڈار جب بھی وطن واپس آنا چاہیں انہیں کوئی نہیں روک سکتا۔.28 جون 2022 سیکرٹری پاکستان ہاکی فیڈریشن آصف باجوہ نے کہا ہے کہ پاکستان ہاکی کاسب سےبڑامسئلہ پیسے کا ہے۔ ایک بیان میں سیکریٹری پی ایچ ایف نے کہا کہ ہاکی ٹیم کی کارکردگی فیڈریشن کی محنت کی وجہ سےہے ایشیاکپ میں ایک میچ میں 12 کھلاڑیوں کو کھلانےکا ایشو سامنے آیا ہیڈکوچ نےذمہ داری لی،کون کب گراؤنڈ میں جائے گا؟ آصف باجوہ نے کہا کہ انکوائری کمیٹی اس معاملےکی تحقیقات کررہی ہے میں سمجھتاہوں کہ یہ ایک انسانی غلطی تھی۔ ان کا کہنا تھا کہ ڈیلز کا مسئلہ تھاجورکی ہوئی تھیں اب ایشیاکپ کی ڈیلیزدیدی گئی ہیں خواجہ جنید نے زبردست کام کیا ہے وہ شاندار مینجر رہے لیکن خواجہ جنیدکامن ویلتھ گیمزکیلئےمنیجرنہیں ہوں گے کوچ کے ویزے کا مسئلہ آ رہا ہے ویزہ جاری ہونےمیں تاخیرٹیکنیکل وجوہات ہیں۔.