کنویں میں گرے ایک شخص کو بچانے کی کوشش میں 5 افراد جاں بحق

28/06/2022 10:00:00 PM

کنویں میں گرے ایک شخص کو بچانے کی کوشش میں 5 افراد جاں بحق

کنویں میں گرے ایک شخص کو بچانے کی کوشش میں 5 افراد جاں بحق

راولپنڈی(آئی این پی ) راولپنڈی کے علاقے اڈیالہ میں واقع گاوں ٹھٹہ میں کنوئیں میں گرنے سے 5 افراد جاں بحق ہوگئے۔ ترجمان ریسکیو 1122 کے مطابق ٹھٹہ گاوں

ریسکیو کا کہنا تھا کہ زندہ بچ جانے والے افراد کو انتہائی تشویشناک حالت میں ہسپتال منتقل کردیا ہے جبکہ تھانہ روات پولیس نے بھی تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔

مزید پڑھ:
Daily Pakistan »

کورونا کیسز میں اضافہ، چوبیس گھنٹے میں مزید 2 افراد جاں بحق، 333 نئے کیسز رپورٹÀllah maafi

کراچی میں لوڈشیڈنگ کیخلاف جگہ جگہ احتجاج، ماڑی پور میں خاتون جاں بحق - ایکسپریس اردوماڑی پور میں 22 گھنٹے سے احتجاج جاری، مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے پولیس کی ہوائی فائرنگ اور لاٹھی چارج آج کراچی اور اور اس کے ارد گرد عوام کا بھرپور احتجاج ہوا جن کا تعلق کسی بھی پارٹی سے نہیں تھا بیچارے غریب عوام تھے ہماری طرح کے لوگ تھے ان پر ظلم کیا گیا لیکن آج کوئی بھی ٹی وی ٹاک شو میں اس کی بات نہیں کرے گا بھرپور بات ہونی چاہیے مجرموں کو سزا ملنی چاہیے جس نے ظلم کیا Dear all 'Nan 20 rs ka ho gya hai' ac waly kamron sy nikalna pary ga, himmat karni ho gee. pmln_org PakPMO CMShehbaz Marriyum_A MaryamNSharif hinaparvezbutt BBhuttoZardari HamidMirPAK ImranRiazKhan asmashirazi AnwarLodhi ImranRiazKhan KhawajaMAsif SaleemKhanSafi

فتح جنگ میں دو گروہوں کے درمیان فائرنگ، 5 افراد جاں بحقفتح جنگ میں دو گروہوں کے درمیان فائرنگ، 5 افراد جاں بحق arynewsurdu

کراچی میں احتجاج کے دوران فائرنگ سے 2 افراد جاں بحقکراچی میں احتجاج کے دوران فائرنگ سے 2 افراد جاں بحق arynewsurdu karachi

راولپنڈی: کنویں میں دم گھٹنے سے 5 افراد جاں بحقراولپنڈی: کنویں میں دم گھٹنے سے 5 افراد جاں بحق arynewsurdu

اردن میں زہریلی گیس سے بھرا ٹرک الٹنے سے 10 افراد جاں بحق - ایکسپریس اردوزہریلی گیس کے اثرات سے بچنے کیلئے محکمہ صحت نے شہریوں سے گھروں میں رہنے اور کھڑکی، دروازے بند رکھنے کی گزارش کردی

میں کنوئیں کی صفائی کے دوران ایک شخص نیچے گرا جس کو بچانے کی کوشش میں دیگر 7 افراد بھی کنوئیں میں گر گئے جن میں سے 3افراد  زہریلی گیس کی وجہ سے جاں بحق ہو گئے،ترجمان کے مطابق ریسکیو ٹیموں کے 10 اہلکاروں نے امدادی کارروائیوں میں حصہ لیا جبکہ آپریشن کے دوران کنوئیں سے 5 افراد کو بے ہوشی کی حالت میں نکالا گیا جس میں سے مزید 2 افراد نے ہسپتال پہنچ کر دم توڑ دیا۔ ریسکیو کا کہنا تھا کہ زندہ بچ جانے والے افراد کو انتہائی تشویشناک حالت میں ہسپتال منتقل کردیا ہے جبکہ تھانہ روات پولیس نے بھی تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔ مزید : .Published On 28 June,2022 10:06 am لاہور: (دنیا نیوز) کورونا کی ممکنہ چھٹی لہر کے سبب ملک بھر میں کورونا کیسز میں اضافہ ہونے لگا، گزشتہ چوبیس گھنٹے کے دوران مزید دو افراد جاں بحق ہو گئے۔ این آئی ایچ کے مطابق مہلک وائرس کے مزید تین سو تینتیس کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جبکہ کورونا مثبت کیسز کی شرح دو اعشاریہ چار دو ریکارڈ کی گئی۔ گزشتہ چوبیس گھنٹے کے دوران تیرہ ہزار سات سو اُنسٹھ ٹیسٹ کئے گئے۔ ملک بھر میں پچاسی مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔ COVID-19 Statistics 28 June 2022 Total Tests in Last 24 Hours: 13,759 Positive Cases: 333.کراچی میں بجلی کی طویل بندش کیخلاف گزشتہ روز سے احتجاج جاری ہے:فوٹو:فائل کراچی کے مختلف علاقوں میں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ سے پریشان شہری احتجاج پر مجبور ہوگئے، ماڑی پور میں 22 گھنٹے سے احتجاج جاری ہے جس کے سبب ہزاروں گاڑیاں پھنس گئیں جب کہ احتجاج کے دوران ایک خاتون جاں بحق ہوگئیں۔ ایکسپریس نیوز کے مطابق کراچی کے مختلف علاقوں میں بجلی کی طویل بندش پر شہری سراپا احتجاج ہیں۔ مختلف علاقوں میں مظاہرین اورپولیس کے درمیان جھڑپیں ہوئیں۔ بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ سے سب سے زیادہ متاثر لیاری اوراس کے اطراف کے علاقوں کے مکین ہوئے جو سڑکوں پر نکل آئے اور احتجاج کیا۔ شہریوں کے احتجاج کے باعث ماڑی پور روڈ، حب ریور روڈ، آرسی ڈی ہائے وے، ایم ٹی خان، مائی کلاچی روڈ اوربوٹ بیسن تک ٹریلر، ٹرک ٹینکر سمیت گاڑیوں کی طویل قطاریں لگ گئیں۔ ماڑی پور میں مظاہرین نے پولیس پر پتھراؤ کیا جبکہ پولیس نے مظاہرین پرلاٹھی چارج کیا اورآنسو گیس کی شلینگ کی۔ متعدد شہریوں کو گرفتار بھی کرلیا گیا۔ پولیس نے مظاہرین کو ہٹانے کے لیے ہوائی فائرنگ بھی کی تاہم مظاہرین منشتر ہونے کے بعد پولیس جاتے ہی دوبارہ سڑک بند کردیتے ہیں۔ ماڑی پور روڈ پر احتجاج کے دوران ایک خاتون ہلاک ہوگئیں۔ ریسیکو ذرائع کے مطابق لیاری میں ہنگورآباد کی رہائشی 60 سالہ میرا بی بی کا انتقال مبینہ طور پر ماڑی پور میں احتجاج کے دوران ہوا۔ ان کی لاش کو پوسٹ مارٹم کے لیے اسپتال منتقل کردیا گیا۔ ایس ایس پی سٹی کا کہنا ہے کہ خاتون کی عمر 70 سال تھی اوران کی موت طبعی طور پر ہوئی۔ مظاہرین کا کہنا ہے کہ ہمارے علاقے میں گزشتہ 12 گھنٹے سے بجلی بند ہے۔ مظاہرین نے مطالبہ کیا کہ کے الیکٹرک کے خلاف ایف آئی آر درج کی جائے۔ دوسری جانب گرفتار مظاہرین کو رہا کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اسی طرح بجلی کے بدترین بحران کے باعث لیاقت آباد، جہانگیر آباد، ناظم آباد، پی آئی بی کالونی اورنگی ٹاؤن، کورنگی اللہ والا ٹاؤن، کورنگی الیاس گوٹھ، لانڈھی فیوچر موڑ سمیت دیگر علاقوں کے مشتعل رہائشیوں نے سڑکیں بلاک کیں، پتھراؤ کیا اور کے الیکٹرک اور حکومت کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔ کراچی میں گزشتہ روز بھی 14 مختلف مقامات پر لوڈشیڈنگ کے خلاف مظاہرے کیے گئے تھے۔ بجلی کی بندش کے خلاف متعدد علاقوں میں پانی کا بھی بحران پیدا ہوگیا ۔ مختلف علاقوں میں پانی کی عدم فراہمی پر بھی احتجاج کیا گیا ۔ شہریوں کا کہنا ہے کہ ہر ایک گھنٹے بعد دو گھنٹے کے لیے بجلی بند کر دی جاتی ہے۔ متعدد علاقوں میں 4 سے 6 گھنٹے مسلسل بجلی کی فراہمی معطل رہتی ہے جبکہ بلدیہ اتحاد ٹاؤن ، قائم خانی کالونی ، گلشن غازی اور اطراف کے علاقے ، لائنز ایریا اے بی سینیا لائن اور گلشن ظہور ، نارتھ ناظم آباد نصرت بھٹو کالونی ، کورنگی الیاس گوٹھ ، گلشن عریشہ ، جوہر کمپلیکس ، رضوان سوسائٹی ، ملیر ، اسکیم 33 گارڈن ، برنس روڈ اور سٹی ریلوے کالونی میں رات 11 بجے سے ایک بجے تک اور صبح 4 بجے سے 7 بجے تک اعلانیہ لوڈ شیڈنگ ہوتی ہے جبکہ غیر اعلانیہ بجلی کی بندش کا کوئی ٹائم ہی نہیں ہے۔.27 جون 2022 اٹک: فتح جنگ میں فریقین کے درمیان فائرنگ کے نتیجے میں 5 افراد جاں بحق ہوگئے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق فریقین کے درمیان فارنگ کا واقعہ اٹک کی تحصیل فتح جنگ میں اراضی کے تنازع پر پیش آیا، جس میں پانچ افراد جان سے چلے گئے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ جاں بحق ہونے والوں میں باپ، بیٹا، چچا اور 2 بھتیجے شامل ہیں، ملزمان کی گرفتاری کیلئے پولیس ٹیمیں تشکیل دے دی گئیں ہیں اور علاقے میں سرچ آپریشن جاری ہے۔ دوسری جانب آئی جی پنجاب نے اٹک میں فائرنگ سے 5 افراد کے قتل کا نوٹس لیتے ہوئے آرپی او راولپنڈی سے واقعےکی رپورٹ طلب کرلی ہے۔ آئی جی پنجاب نے ڈی پی او اٹک کو فوری جائے وقوعہ پر پہنچنے کی ہدایت کی ہے اور ملزمان کی گرفتاری کیلئےاسپیشل ٹیمیں تشکیل دینےکا حکم دیا ہے۔.