مایوس اور سمجھوتہ کرنے والوں کے نام

ہزار بار پڑھ اور سن رکھا ہے کہ مایوسی اورنااُمیدی کفر ہے پھر یہ بھی حکم دیا گیا کہ اللہ کی رحمت سے مایوس نہ ہوں مگر بد قسمتی سے پاکستان میں ہر شخص مایوسی،

Pakistan, Inflation

28/11/2021 5:36:00 PM

مایوس اور سمجھوتہ کرنے والوں کے نام مگر بد قسمتی سے پاکستان میں ہر شخص مایوسی، نااُمیدی اور انجانے خوف میں مبتلا ہے ، ہمت کرنے کی بجائے کسی معجزے اور شارٹ کٹ کا منتظر ہے Pakistan Inflation ImranKhanPTI Govtof Pakistan

ہزار بار پڑھ اور سن رکھا ہے کہ مایوسی اورنااُمیدی کفر ہے پھر یہ بھی حکم دیا گیا کہ اللہ کی رحمت سے مایوس نہ ہوں مگر بد قسمتی سے پاکستان میں ہر شخص مایوسی،

غریب طالب علم کی پریشانیاں 5 جون 1992ء کوسندھ کے گاؤں میں ایک آفیسر نے اپنے ساتھیوں کے ہمراہ چھاپہ مار کر 9 کسانوں کو اُٹھایا اور جامشورو کے نزدیک دریائے سندھ کے کنارے لے جا کر قتل کر دیا۔ لاشیں گاؤں آئیں تو نہ صرف گاؤں بلکہ پورے علاقے میں کہرام مچ گیا ہر ماں اپنے بیٹے کی لاش پر ماتم کر رہی تھی۔مگر ان ماؤں میں ایک 72 سال کی بوڑھی مائی جندو بھی تھی، جس کے سامنے اس کے دو بیٹوں بہادر اور منٹھار کے علاوہ داماد حاجی اکرم کی لاش پڑی تھی مگر وہ خاموشی سے سکتے کے عالم میں بیٹوں اور داماد کے کفن میں لپٹے چہرے دیکھے جا رہی تھی ۔ وہ بس اتنا ہی بولی مائی جندو اب اس دن ہی روئے گی جب بیٹوں کے قاتل کو پھانسی کے پھندے میں لٹکتا دیکھے گی۔مائی جندو بوڑھی تھی جسمانی لحاظ سے کمزور مگر وہ تین مقتولوں کی وارث تھی اس نے طاقتورسے مقابلہ کرنے کا فیصلہ کیا اور اپنی دو بیٹیوں کو ساتھ لے کر قاتلوں کیخلاف اعلان جنگ کر دیا۔گرد چھٹی تو معلوم ہوا کہ قتل ہونے والوں سے قاتل کا زرعی زمین کا جھگڑا تھا، جس کی سزا میں 9 افراد کو قتل ہونا پڑا تھا۔29 اکتوبر کو اس آفیسر کوسزائے موت جبکہ 13 ساتھیوں کو عمر قید کی سزا سنائی گئی مگر سابق صدر فاروق لغاری نے سزا پر عملدرآمد روک دیا ۔11 ستمبر 1996 ء کو مائی جندوپھر میدان میں نکلی اور اس کی دو بیٹیوں نے حیدرآباد پریس کلب کے سامنے اپنے اوپر تیل چھڑک کر خود کو آگ لگا لی، ان کو ہسپتال لیجایا گیا مگر وہ جانبر نہ سکیں۔ ملک بھر میں ایک بار پھر کہرام مچ گیا۔ بالآخر 28 اکتوبر1996ء کو مائی جندو کو پھانسی گھاٹ پر لایا گیا تو سامنے تختہ دار پر اس کے گاؤں کے 9 بیٹوں کا قاتل کھڑا تھا ۔ دارکا تختہ کھینچا گیا اور قاتل کا جسم تختہ دار پر جھول گیا تو مائی جندو کھل کر روئی۔ حصول انصاف کیلئے قربانی دینی پڑتی ہے خواہ وہ زندگی ہی کی کیوں نہ ہواور مائی جندو تو ایک گھوڑا تھی۔

حسب حال مشورےایران کے ائیر پورٹ پر ایک غیر ملکی خاتون صحافی جس کا نام غالباً آریانا فلاسی تھا ، نے ملک بدر ہوتے امام خمینی سے سوال کیاکہ وہ سارے کے سارے لوگ کہاں ہیں جو آپکے ماننے والے، نظریات کو تسلیم کرنے اور آپکی خاطر ہرطرح کی قربانی دینے والے تھے، اب تو یہاں کو ئی ایک بھی دکھائی نہیں دے رہا تو امام خمینی نے جواب دیا کہ وہ ابھی شیر خوارہیں جب وہ جوان اورتنومند ہوجائینگے تو میں واپس آجاؤں گا ۔اور تاریخ گواہ ہے کہ 18 سالہ جلا وطنی کے بعد جب امام خمینی واپس ایران آئے تو ان کا استقبال کرنے اور ساتھ دینے والے لاکھوں افراد کے مجمع میں18 سے 25 سال کے نوجوان ہی تھے ۔ یہی الفاظ عمران خان نے بھی 24 سال قبل کہے تھے مگر عملدرآمد میں فرق ہے ۔

جھوٹ کے سوداگرخوشاب کے ایک انتہائی غریب اور ’’معمولی‘‘ آدمی ، کہ یہ ’’معمولی‘‘ میں نہیں کہہ رہا کہ اسے ’’ معمولی‘‘ اور دو ٹکے کا آدمی ان تین بااثر ترین افسران نے کہا تھا جن پر 26 کروڑ کرپشن کا الزام تھا اور وہ ’’ معمولی ‘‘ آدمی اکلوتا مدعی تھا۔وہ خوشاب سے سرگودھا جاتا اور اپنی درخواست کی پیروی کرتا ۔ جن پر الزام تھا ان تینوں کا تعلق انتہائی بااثر خاندانوں سے تھا۔انہوں نے آج سے 9 سال قبل 25 کروڑ کی کرپشن کی اور صرف 5 کروڑ کا خوشاب کا سوہن حلوہ جسے ڈھوڈا کہتے ہیں ۔ سرکاری ریکارڈ کے مطابق ہیلتھ ٹریننگ کیلئے آنے والوں میں یہ تقسیم کرنا ظاہر کیا ، اس وقت خوشاب کے ڈھوڈے کی قیمت 275 روپے سے 300 روپے فی کلو تھی ۔جبکہ پورے ضلع خوشاب کی آبادی سوا بارہ لاکھ مگر اس قیمت کے حساب سے 5 کروڑ روپے کے حلوے کا 17 لاکھ ہیلتھ ٹرینر میں تقسیم کیا جانا بذات خود ایک معجزہ ہی تھا ۔وہ ’’ معمولی ‘‘ آدمی لڑتا رہا ، نہ اس نے اپنی قیمت لی، نہ مایوس ہوا نہ ہی پیچھے ہٹا ۔ اور پھر اس کیس میں تینوں بااثر کئی ماہ تک جیل میں قیدی رہے ۔میں نے ’’ معمولی ‘‘ اس لئے لکھا ہے کہ ان بااثر افراد میں سے ایک کو میں نے کہا چار بندے لے جا کر مدعی کی منت کرلیں۔ اور حکومت کو کسی طرح ادائیگی کردیں ۔ وہ مقامی افراد کا دباؤ برداشت نہیں کرے گا اور مان جائے گا مگر ان متکبر افراد میں سے ایک نے کہا اگر ہم ٹکے ٹکے کے معمولی بندوں کی منتیں شروع کردیں تو ہم نے شہر میں عزت سے رہ لیا۔بس پھر عزت بھی گئی اور جیل بھی ملی ، محض اس لئے کہ وہ’’ معمولی ‘‘ آدمی ڈٹا اور ان کا مقابلہ کرتا رہا۔گھوڑے کی طرح سارے دباؤ کو اس نے بھی چھاتی پر ہی لیا۔ headtopics.com

NewsOne 10 AM Headlines| Rising oil prices | 29 January 2022

آڈیو کا طوفان،کامیاب جوان اور گھر آیا مہمان !!

مزید پڑھ: Daily Nawa-i-Waqt »

Pakistan ka pehla restaurant jaha aap khud ghar se khana laa kar bech saktay hain

پاکستان کا پہلا ریسٹورنٹ جہاں آپ خود گھر سے کھانا لا کر بیچ سکتے ہیںContact: +92307-1559956#Burns_Road_House #Best_Restaurants_in_Lahore مزید پڑھ >>

مایوس اور سمجھوتہ کرنے والوں کے ناممایوس اور سمجھوتہ کرنے والوں کے نام مگر بد قسمتی سے پاکستان میں ہر شخص مایوسی، نااُمیدی اور انجانے خوف میں مبتلا ہے ، ہمت کرنے کی بجائے کسی معجزے اور شارٹ کٹ کا منتظر ہے Pakistan Inflation ImranKhanPTI Govtof Pakistan ImranKhanPTI GovtofPakistan ImranKhanPTI GovtofPakistan short cut ni rozgar ki zarort ha .laon dyne logon ko job creat hongyn or logon mai khush hali aayi gi.

کہ حرکت تیز تر ہے اور سفر آہستہ آہستہکہ حرکت تیز تر ہے اور سفر آہستہ آہستہ ر ممالک میں پاکستان سے اربوں روپے میںلوٹی ہوئی دولت واپس لانے والے، اپنوں اور غیروں سے قرض نہ لینے کے دعوے دار، ایم آئی ایف کا قرض اُس کے منہ پر مار کر لوٹانے والے PTI Govt Govtof Pakistan

کامیابیاں اور عزت صرف اللہ کی ذات دیتی ہے:وزیر اعظماسلام آباد: وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کامیابیاں اور عزت صرف اللہ کی ذات دیتی ہے، مذہب کے معاملے پر کسی سے زبردستی نہیں کی جاسکتی۔ تفصیلات کے مطابق وزیر PTIofficial ImranKhanPTI MoIB_Official GovtofPakistan اللہ تعالی نے جس کی قسمت میں زلالت و رسوائی لکھ دی ہو وہ اقتدار میں بھی زلیل و خوار لیتا ہے ۔ PTIofficial ImranKhanPTI MoIB_Official GovtofPakistan الله نے تجھے تیری شدید خواہش اور کوشش پر اقتدار تک رسائی فراہم کی پھر تو افتاد طبع پر عناد و عتاب میں کامیاب ہوا اور مسجود ملائک مخلوق کو خون کے آنسوں رلایا اور دھوکہ کیا۔ ذرا ہٹ لے پھر تجھے سب معلوم پڑجاۓ گا۔

کامیابیاں اور عزت صرف اللہ کی ذات دیتی ہے:وزیر اعظمپاکستان کو ریاست مدینہ بنانا میری زندگی کا مقصد ہے، عمران خان Read News Islamabad PMImranKhan PTIofficial ImranKhanPTI sh_hamzayusuf ShaykhHamzaYusuf Interview PakPMO

چاند ہرجائی ہے، ہر گھرمیں اُتر آتا ہے - ایکسپریس اردوہم سب کے لیے لڑتے ہیں گھر سے باہر نکلتے ہیں کشمیر سے فلسطین تک ہماری ذمے داری ہیں لیکن کبھی نہیں نکلے تو بس اپنے لیے۔

نیوی اور میری ٹائم ایجنسی کے بحری جہازوں کا عمان اور بحرین کا دورہنیوی اور میری ٹائم ایجنسی کے بحری جہازوں کا عمان اور بحرین کا دورہ Read News PakNavyShip Oman Bahrain OmanObserver OmaniMOH bna_en bahdiplomatic MOH_Bahrain moi_bahrain Pakistan NavyNHQ dgprPaknavy Pakistan Navy