لانگ مارچ: لاہور سے اسلام آباد تک اہم شاہرائیں بند، پولیس اور پی ٹی آئی کارکنان میں جھڑپیں، متعدد گرفتار

25/05/2022 10:07:00 AM

پولیس کا یاسمین راشد کی گاڑی پر لاٹھی چارج، ونڈ اسکرین ٹوٹ گئی براہ راست: #GeoNews #LongMarch

Geonews, Longmarch

پولیس کا یاسمین راشد کی گاڑی پر لاٹھی چارج، ونڈ اسکرین ٹوٹ گئی براہ راست: GeoNews LongMarch

اسلام آباد میں پولیس، رینجرز اور ایف سی کو تعینات کر دیا گیا ہے اور ریڈ زون کو سیل کر دیا گیا ہے۔

اسلام آباد میں سکیورٹی کے سخت انتظاماتحکومت نے اسلام آباد کے لیے پولیس، رینجرز اور ایف سی بلا لی ہے اور ریڈ زون سیل کر دیا گیا ہے۔ صوبہ پنجاب، سندھ اور وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں پانچ سے زائد افراد کے جمع ہونے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔حکومت پنجاب نے تحریک انصاف کے رہنماؤں محمود الرشید اور سینیٹر اعجاز چوہدری سمیت مختلف شہروں کے مقامی رہنماؤں اور درجنوں کارکنوں کو ایم پی او کے تحت حراست میں لے لیا ہے جبکہ دیگر رہنماؤں کی گرفتاری کے لیے ان کے گھروں پر چھاپے بھی مارے جا رہے ہیں۔

راولپنڈی اور اسلام آباد میں میٹرو بس سروس بند کر دی گئی ہے جبکہ جڑواں شہروں میں آج ہونے والے پرچے بھی ملتوی کر دیے گئے ہیں۔راولپنڈی اسلام آباد کے تمام بس اڈے سیل کر دیے گئے ہیں اور ٹرانسپورٹرز کو گاڑیاں سڑکوں پر نہ لانے کی ہدایت کی گئی ہے۔ملکی سیاسی صورتحال کے پیش نظر پنجاب پیٹرولیم ایسوسی ایشن نے آج تیل کی فراہمی بند رکھنے کا اعلان کیا ہے جبکہ لاہور سمیت پنجاب کے 350 سے زیادہ مقامات پر موبائل فون سروس بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

مزید پڑھ: Geo News Urdu »

Apki jild ki rangat nikharnay k Liye Hunza Herbal ki masnooat

آپ کی جلد کی رنگت نکھارنے کے لئے Hunza Herbal کی مصنوعات#HunzaHerbal #herbalproducts For Call: 03041111735WhatsApp : 0300-0884844 مزید پڑھ >>

kal to ye aurat benar ti aaj sehyatyaab ho gai😂 خدانخواستہ اگر خان ناکام ہوگیا۔ تو پھر اس ملک کے حقیقی آزادی کیلئے پوری ملک سے 1000 نوجوانوں کو سینے پر بم باندھ کر GHQ، بھٹو خاندان اور شریف خاندان کے گھروں کا رخ کرنا ہوگا۔ ورنہ اس ملک کا کوئی مستقبل نہیں۔ امپورٹڈ_حکومت_نامنظور حقیقی_آزادی_مارچ This is just crazy 😛

Dreamer4927 Hrami log Gullu butt Salo TRP nahi mel rahi fake news bana rahe ho Bosri walo eska hesab bhi liya jayega thumse پاکستان میں عورت تو صرف ایک ھے وہ مریم نواز ھے باقی تو سب کیڑے مکوڑے ہیں امپورٹڈ__حکومت___نامنظور IMRAN KHAN ZINDABADAD WeAreComingKaptaan LongMarch

لانگ مارچ، PTI کارکنوں اور پولیس میں ہاتھا پائی، پولیس کی شیلنگ، متعدد کارکن گرفتارپاکستان تحریک انصاف کے لانگ مارچ کے سبب ملک بھر مختلف مقامات پر شاہراہوں کی بندش کا سلسلہ جاری ہے ، لاہور میں کارکنان اور پولیس آمنے سامنے آگئے۔ DailyJang

اسلام آباد اورلاہور میں پولیس کیجانب سے پی ٹی آئی ورکرز کیخلاف کریک ڈاؤن جاریاسلام آباد پولیس نے لانگ مارچ کرنے والوں کے لیےکھانا بنانے والوں کے خلاف بھی کریک ڈاؤن کا فیصلہ کیا ہے، ذرائع Beghairat channel of hera mandi سارا ملک بند کردیا گیا ہے صرف عمران خان اور اسکے کارکنان کو اسلام آباد پہنچنے سے روکنے کےلئے.... اور بولتے ہیں عمران خان سے ہمیں کوئی مسئلہ نہیں ہے۔

دعا زہرہ اور نمرہ کی بازیابی میں پنجاب پولیس تعاون نہیں کررہی: شہلا رضا - ایکسپریس اردوشہلا رضا کا کہنا تھا کہ پیر تک بچیاں بازیاب نہیں ہوئیں تو پنجاب اور کے پی کے جاکر فیملیز کے ساتھ احتجاج کریں گے تے اپنے چچا شباز نو بولو محترمہ پنجاب پولیس آپکے حکومتی اتحاد کو عمران خان سے بچانے میں مصروف ہے عام شہریوں اور سیاسی ورکرز کو بلا وجہ گرفتار کرنے کا اہم فریضہ انجام دے رہی ہے ان چھوٹے کاموں کے لیے وقت کہاں انکے پاس Punjab police is engaged otherwise. They are arresting the world’s most wanted people such as Mehmood Ur Rasheed and raiding houses of former federal ministers. They’re so devoted to their job that they dont even care if it’s 3’o’clock in the morning. They’re worry about families

راولپنڈی اور اسلام آباد میں پیٹرولیم مصنوعات کی سپلائی معطل - ایکسپریس اردوجڑواں شہروں میں پیٹرول پمپس پر فی الحال اسٹاک ختم ہونے کی صورتحال نہیں ہے

اسلام آباد پولیس نے ڈی چوک پہنچنے والے 7 پی ٹی آئی کارکن گرفتار کرلیےاسلام آباد پولیس نے ڈی چوک پہنچنے والے 7 پی ٹی آئی کارکن گرفتار کرلیے جہاد اور بغاوت اسلامی جمہوری، آئین و قانون میں جہاد کا اعلان صرف حکومت کرسکتی ہے حکومت کے خلاف جہاد بغاوت کہلاتا ہے اور بغاوت کوئی بھی کرے اس کو کچلنا وقت کا حق ہوتا ہے یہ حکومت آئین پاکستان کےعین مطابق بنی ہے احتجاج،جسلہ جلوس سب کا حق ہے لیکن جہاد بغاوت ہے اور بغاوت آرٹیکل 6 ہے سات نہیں سات لاکھ ہوں گے۔ باقی جو آنے والے تھے وہ اب سوشل میڈیا سے ہی جہاد جاری رکھیں گے

پولیس کے پی ٹی آئی رہنماؤں اور کارکنوں کے گھروں پر چھاپےعمران خان کی جانب سے لانگ مارچ کے اعلان کے بعد پولیس نے لاہور سمیت پنجاب، کراچی اور اسلام آباد کے مختلف علاقوں میں پی ٹی آئی رہنماؤں اور کارکنوں کے گھروں پر چھاپے مارے ہیں۔ DailyJang 🤣🤣🤣🤣😀😀😀

وفاقی کابینہ کا پی ٹی آئی کو لانگ مارچ کی اجازت نہ دینے کا فیصلہ اسلام آباد میں سکیورٹی کے سخت انتظامات حکومت نے اسلام آباد کے لیے پولیس، رینجرز اور ایف سی بلا لی ہے اور ریڈ زون سیل کر دیا گیا ہے۔ صوبہ پنجاب، سندھ اور وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں پانچ سے زائد افراد کے جمع ہونے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔ حکومت پنجاب نے تحریک انصاف کے رہنماؤں محمود الرشید اور سینیٹر اعجاز چوہدری سمیت مختلف شہروں کے مقامی رہنماؤں اور درجنوں کارکنوں کو ایم پی او کے تحت حراست میں لے لیا ہے جبکہ دیگر رہنماؤں کی گرفتاری کے لیے ان کے گھروں پر چھاپے بھی مارے جا رہے ہیں۔ راولپنڈی اور اسلام آباد میں میٹرو بس سروس بند کر دی گئی ہے جبکہ جڑواں شہروں میں آج ہونے والے پرچے بھی ملتوی کر دیے گئے ہیں۔ راولپنڈی اسلام آباد کے تمام بس اڈے سیل کر دیے گئے ہیں اور ٹرانسپورٹرز کو گاڑیاں سڑکوں پر نہ لانے کی ہدایت کی گئی ہے۔ ملکی سیاسی صورتحال کے پیش نظر پنجاب پیٹرولیم ایسوسی ایشن نے آج تیل کی فراہمی بند رکھنے کا اعلان کیا ہے جبکہ لاہور سمیت پنجاب کے 350 سے زیادہ مقامات پر موبائل فون سروس بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ادھر کراچی میں بھی پی ٹی آئی کے احتجاج کے اعلان کے بعد کوریڈور تھری پر پیپلز چورنگی سے پارکنگ پلازہ آنے اور جانے والی سڑک کو بند کر دیا گیا ہے جبکہ نمائش چورنگی جانے والے راستوں کو بھی بند کر دیا گیا ہے۔ یاد رہے کہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان آج پشاور سے لانگ مارچ کے لیے اسلام آباد روانہ ہوں گے جبکہ حکومت نے خیبر پختونخوا اور پنجاب کی سرحد کو اٹک خورد کے مقام پر کنٹینرز لگا کر بند رکھا ہے۔ مزید خبریں : .اس سے قبل لاہور میں شاہدرہ موڑ سے بتی چوک آنے والا راستہ بند کیا گیا تھا جبکہ لاہور میں داخل ہونے والی ٹریفک کو بھی روک دیا گیا ہے۔ جی ٹی روڈ پر اٹک کے قریب ہرو پل کو دو طرفہ ٹریفک کیلئے بند کر دیا گیا ہے، پل پر مٹی ڈال دی گئی ہے اور دونوں اطراف کنٹینر لگائے دیئے گئے ہیں۔ اسلام آباد اسلام آباد میں جناح ایونیو چائنا چوک پر کنٹینر لگا کرسڑک بند کر دی گئی ہے، جی 10 سے اسلام آباد میں داخلی راستہ بھی کنٹینر لگا بند کیا گیا ہے۔ کراچی کراچی میں کوریڈور تھری سے مزار قائد جانے والا راستہ ٹریفک کے لیے بند کردیا گیا ہے۔ کوریڈور تھری کو ٹینکر لگا کر بند کیا گیا ہے جس کے سبب پیپلز چورنگی سے پارکنگ پلازہ آنے اور جانے والی سڑک بند ہے۔ ٹریفک پولیس کے مطابق سڑک کو سیکیورٹی وجوہات کی بنا پر بند کیا گیا ہے، جبکہ پیپلز چورنگی سے گاڑیوں کو متبادل راستوں پر موڑا جارہا ہے۔ فیصل آباد فیصل آباد میں موٹروے ایم تھری اور ایم فور ٹریفک کیلئے بند کی گئی ہے، کمال پور انٹرچینج، ساہیانوالہ، ڈپٹی والا، جڑانوالہ اور سمندری انٹرچینج کنٹیر رکھ کر بند کیے گئے ہیں۔ فیصل آباد شہر کے 10 داخلی اور خارجی پوائنٹس پر ناکہ بندی کرکے پولیس کی بھاری نفری تعینات کی گئی ہے۔ گوجرانوالہ گوجرانوالہ میں جی ٹی روڈ مریدکے مقام پر پولیس نے پیدل گزرنے والا راستہ بھی بند کردیا ہے۔ گوجرانوالہ سے لاہور جانے والے افراد نالہ ڈیک کے گندے پانی سے گزر کر جانے پر مجبور ہیں۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت سیاسی کمیٹی کے ہونے والے اجلاس میں پاکستان تحریک انصاف کے لانگ مارچ کو روکنے کا فیصلہ کیا گیا ہے،اجلاس میں اس بات کا عزم کیا گیا کہ ہر غیر قانونی کام کا راستہ روکا جائے گا۔ دوسری جانب وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناء نے اتحادی جماعتوں کے وفاقی وزراء کے ہمراہ اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا تھا کہ وفاقی کابینہ نے فیصلہ کیا ہے لانگ مارچ کی اجازت نہیں دی جائے گی، انہیں روکا جائے گا، یہ لوگ اسلام آباد آ کر افراتفری پھیلائیں گے۔ انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ یہ لوگ گالیوں سے گولیوں پر آ گئے ہیں، لانگ مارچ کے نام پر فتنہ مارچ کیا جا رہا ہے، لانگ مارچ کے نام پر قوم کو تقسیم کیا جا رہا ہے، اس فتنے اور فساد کو روکنے کیلئے تمام سیاسی جماعتوں کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیے۔ علاوہ ازیں پشاور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم اور پاکستان تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان نے کہا تھا کہ ہرحال میں اسلام آباد کے لیے نکلیں گے، کابینہ کا ہمیں روکنے کا فیصلہ غیر قانونی ہے۔ عمران خان نے کہا تھا کہ جب یہ اقتدار میں نہیں ہوتے تو انہیں جمہوریت یاد آ جاتی ہے، اس حکومت اور فوجی آمروں کے درمیان کوئی خاص فرق نہیں، فاشسٹ حکومت کی تاریخ ہمیں معلوم ہے، یہ وہی حربے استعمال کرتے ہیں جو آمر کرتے ہیں۔ قومی خبریں سے مزید.اسلام آباد پولیس نے ڈی چوک پہنچنے والے 7 پی ٹی آئی کارکن گرفتار کرلیے ذرائع کے مطابق لانگ مارچ کرنے والوں کے لیےکھانا بنانے والوں کے خلاف بھی کریک ڈاؤن کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اسلام آباد میں گرفتار 100 سے زائد افراد کو تھری ایم پی او کے تحت جیل بھجوایا جا رہا ہے۔ کریک ڈاؤن کے لیے مزید ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں، رینجرز کی نفری بھی اسپورٹس کمپلیکس پہنچ چکی ہے۔ دوسری جانب لاہور میں بھی پولیس کا پی ٹی آئی ورکرز کے خلاف کریک ڈاؤن جاری ہے، پولیس نے اب تک247 افرادکو حراست میں لیا ہے۔ پولیس ذرائع کا کہنا ہےکہ زیرحراست افرادکو انویسٹی گیشن پولیس کے حوالے کردیا گیا ہے، ان افراد کو فیصل آباد، میانوالی اور نارروال کی جیلوں میں منتقل کرنے کا پلان ہے۔ مزید خبریں :.(فائل: فوٹو) کراچی: صوبائی وزیر برائے ترقی حقوق نسواں شہلا رضا نے کہا ہے کہ پنجاب پولیس سندھ کی بچیوں کی بازیابی میں تعاون نہیں کررہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی کے علاقے گولڈن ٹاؤن سے پنجاب جانے والی لڑکی دعا زہرا کے والد سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ میڈیا سے گفتگو میں شہلا رضا کا کہنا تھا کہ یو ٹیوبرز بچیوں تک پہنچ گئے مگر پنجاب پولیس کو کوئی سراغ معلوم نہیں ہورہا۔آئی جی پنجاب کہتے ہیں بچیاں کے پی کے چلی گئیں۔معلوم ہوا ہے کہ یہ منظم گروہ ہے جو بچیاں اغوا کرکے دبئی بھیجتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پیر تک بچیاں بازیاب نہیں ہوئیں تو پنجاب اور کے پی کے جاکر فیملیز کے ساتھ سڑک پر بیٹھ کر احتجاج کریں گے۔ پنجاب پولیس درخواست کے باوجود دونوں بچیوں کو بازیاب میں سندھ پولیس کیساتھ تعاون نہیں کررہی ہے ،پنجاب پولیس پرحیرت ہے۔ انہوں نے کہا کہ دونوں بچیوں کی عمریں 14 سال کے قریب ہیں پنجاب کے قوانین میں بھی 18سال سے کم عمربچی کی شادی نہیں ہوسکتی ہے۔ صوبائی وزیر شہلارضا نے کہا کہ یہ منظم گروہ ہے،جس کی لیاقت آباد کی ایک فیملی نے بھی پہچان کی ہے۔ انہوں نے کہاکہ نمرہ کے والدین پنجاب گئےہوئے ہیں۔میں خود ماں ہوں، بچیوں کی بازیابی کے لیے ہر حد تک جاؤں گی۔آئی جی کے پی سے بھی رابطہ کروں گی کہ بچی کی بازیابی کے لئے مدد کی جائے جبکہ وزیراعلی سندھ نے پنجاب حکومت سے بات کی ہے۔ اس موقع پر دعا زہرہ کے والدین کے وکیل نے کہا کہ کہا جارہا ہے کہ ایف آئی آر واپس لی جائے بچی دے دیں گے۔2022 سے2017تک دوہزاربچیاں اغواہوئی ہیں۔دعازہرہ کو اغوا کیا گیا ہے۔ہمیں پولیس پر یقین ہے بس انہیں کارکردگی دکھانے کی ضرورت ہے۔.