Russian, Inmates

روسی خواتین قیدیوں کا جیل منتظمہ کے قتل کا ’اعتراف‘ - Pakistan - Dawn News

10/10/2019 11:30:00 AM

روسی قیدیوں کو فارن ایکٹ کے تحت وفاقی تحقیقاتی ایجنسی نے چاغی کے علاقے سے رواں برس گرفتار کیا تھا Russian Inmates Balochistan DawnNews Murder مزید پڑھیں:

قتل میں 3 روسی قیدیوں کے ملوث ہونے کا انکشاف دیگر 2 خواتین قیدیوں نے کیا تھا—فائل فوٹو: اے ایف پیکوئٹہ: سینٹرل جیل گڈانی میں قید 3 روسی خواتین نے خاتون منتظمہ کے قتل میں ملوث ہونے کا اعتراف کرلیا۔پولیس تفتیش کار کے مطابق ابتدائی تحقیقات میں قیدیوں نے قتل کی وجہ کے بارے میں کچھ نہیں بتایا۔

انگلینڈ کی بیٹنگ مشکل میں، چار وکٹیں گِر گئیں - BBC News اردو سلامتی کونسل میں مسئلہ کشمیر اٹھانے پر وزیراعظم کا خیرمقدم ’قابل اعتماد‘ شاداب کے چرچے، ’سرفراز کو پانی پلانے میں کوئی شرمندگی نہیں ہونی چاہیے‘ - BBC News اردو

خیال رہے کہ گڈانی کی سینٹرل جیل کے خواتین سیل میں تعینات 23 سالہ زویا یحییٰ کو منگل کی صبح تشدد کر کے قتل کردیا گیا تھا۔مذکورہ قتل میں 3 روسی قیدیوں کے ملوث ہونے کا انکشاف دیگر 2 خواتین قیدیوں نے کیا تھا۔یہ بھی پڑھیں:گڈانی سینٹرل جیل: روسی خواتین قیدیوں پر منتظمہ کے قتل کا الزام

جیل میں روسی خواتین قیدیوں کے رویے کے بارے میں آگاہ کرتے ہوئے گڈانی جیل کے سپرنٹنڈنٹ شکیل بلوچ کا ڈان سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ اس واقعے سے قبل انہوں نے کبھی پرتشدد رویہ نہیں اپنایا جبکہ جیل عملے کے علاوہ قیدیوں کے ساتھ بھی ان کا رویہ ٹھیک تھا۔ان کا مزید کہنا تھا ک پولیس ایف آئی آ ر درج کر کے تینوں ملزمان سے تفتیش کررہی ہے تاہم خاتون منتظمہ کے قتل کے پسِ پردہ محرک اب تک سامنے نہیں آسکا۔

دوسری جانب زویا یحییٰ کا پوسٹ مارٹم کرنے والے ہسپتال کے ذرائع کا کہنا تھا کہ اس کے سر پر ضرب مارنے کے بعد گلا گھونٹا گیا۔سپرنٹنڈنٹ جیل نے بتایا کہ روسی قیدیوں کو چند ماہ قبل ہی کوئٹہ کی ضلعی جیل سے گڈانی منتقل کیا گیا تھا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ اس وقت 11 خواتین اور 2 مرد سمیت 13 روسی قیدی جس گڈانی جیل میں موجود ہیں جس میں 10 سے 16 سال کی عمر کے 4 نوجوان اور 2 بچے بھی شامل ہیں۔

مزید پڑھیں:بلوچستان: خاتون کے ساتھ ریپ کا الزام، اے ایس آئی گرفتارسپرنٹنڈنٹ جیل کے مطابق روسی قیدیوں کو فارن ایکٹ کے تحت وفاقی تحقیقاتی ایجنسی نے چاغی کے علاقے سے رواں برس گرفتار کیا تھا جو اپنی سزا پوری کرچکے اور اب ڈی پورٹ کیے جانے کی رسمی کارروائی کے منتظر ہیں۔

انہوں نے یہ بھی بتایا کہ ان قیدیوں کو قونصل رسائی بھی دی گئی تھی اور کراچی قونصل خانے کے سفارتی اہلکاروں نے ان سے ملاقات بھی کی تھی اور اب یہ قیدی قونصل خانے کی کارروائی مکمل ہونے کے منتظر ہیں جبکہ جیل انتظامیہ اپنی کارروائی مکمل کرچکی۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ’اب ان قیدیوں کو قتل کے الزام کے باعث ڈی پورٹ نہیں کیا جاسکتا اور روسی قونصل خانے کو مذکورہ واقعے اور ان کے ہم وطنوں کے اس میں ملوث ہونے کی بابت آگاہ کردیا گیا ہے۔

یہ خبر 10 اکتوبر 2019 کو ڈان اخبار مین شائع ہوئی۔ مزید پڑھ: DawnNews »

گڈانی سینٹرل جیل: روسی خواتین قیدیوں پر منتظمہ کے قتل کا الزام - Pakistan - Dawn News

گڈانی سینٹرل جیل: روسی خواتین قیدیوں پر منتظمہ کے قتل کا الزام - Pakistan - Dawn NewsOMG 😱

پولی کلینک ہسپتال میں خواتین کو ہراساں کرنے کا نوٹس،انکوائری کا حکمwww.24newshd.tv

ایران کا امریکی پابندیوں سے متاثٖر ہونے کا اعتراف، تیل کی صنعت خسارے کا شکارتہران: ایرانی وزیر تیل بیژن زنگنہ نے امریکی پابندیوں سے متاثر ہونے کا اعتراف کرتے ہوئے عزم کا اظہار کیا کہ ان پابندیوں کے خلاف مزاحمت بھی جاری رکھیں گے۔ If Pakistan wants to come out of economy crisis they should join Turkey Russia and Iran and some other regional countries like China on money unit,, one way of coming out of economic slavery ,

چینی وزیراعظم اور عمران خان کا گرمجوشی کا انداز عظیم دوستی کا مظہر ہے: فردوس عاشقVeheeli nakammi Uff..the intolerable,inarticulate &cring-worthy Dr_FirdousPTI

”35 سال سے کم عمر تمام مسلمان خواتین کا انہوں نے ریپ کیا“بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) چین میں ’ازسرنو تعلیم‘ کے نام پر لاکھوں مسلمانوں کو حراستی