توہین مذہب کے الزام میں قید جوڑے کی اپیل کا فیصلہ آج متوقع

توہین مذہب کے الزام میں قید شگفتہ کوثر اور شفقت ایمینوئل کو اپنی اپیل کے فیصلے کا انتظار

03/06/2020 7:40:00 AM

توہین مذہب کے الزام میں قید شگفتہ کوثر اور شفقت ایمینوئل کو اپنی اپیل کے فیصلے کا انتظار

شگفتہ کوثر اور ان کے شوہر شفقت ایمینوئل انتظار میں ہیں کہ کب انھیں توہینِ رسالت کے الزام میں ملنے والی سزائے موت کے خلاف اپیل کا فیصلہ سنایا جائے گا۔

لیکن ساتھ ہی انھوں نے یہ خبردار کیا کہ پاکستان میں جج اس طرح کے مقدمات میں ملزم کو بری کرنے سے 'ڈرتے' ہیں کہ کہیں وہ خود شدت پسندوں کا نشانہ نہ بن جائیں۔ اوپر سے کورونا وائرس کی وجہ سے اس وقت عدالتی نظام بھی سست ہے۔اس جوڑے کو موت کی سزا سنہ 2014 میں ہوئی جب ان کے خلاف چلائے گئے مقدمے میں یہ الزام ثابت ہوا کہ جس موبائل نمبر سے مقامی مسجد کے امام کو پیغمبرِ اسلام کے بارے میں توہین آمیز میسیجز بھیجے گئے تھے وہ نمبر ان کے نام پر رجسٹر تھا۔

آرمی چیف کا کارگل جنگ میں نشان حیدر پانے والے دوعظیم سپوتوں کوخراج عقیدت پیش وفاقی کابینہ کااجلاس جاری، پائلٹس کے مشکوک لائسنس کی منسوخی کا فیصلہ متوقع کیا چین وادی گلوان سے واپس لوٹ گیا ہے؟

پاکستان میں توہینِ رسالت کی سزا موت ہے لیکن آج تک اس سزا پر عمل درآمد نہیں کیا گیا۔ تاہم ماضی میں بہت سے لوگوں پر یہ الزام لگنے کے بعد مختلف مشتعل ہجوموں نے ان کا قتل کیا ہے۔شگفتہ کے بھائی جوزف نے بی بی سی کو بتایا کہ ان کی بہن اور بہنوئی بے قصور ہیں اور انھیں یہ بھی نہیں پتا کہ آیا ان دونوں کے پاس اتنی تعلیم ہے بھی کہ وہ موبائل پر اس طرح کے میسج لکھ سکیں۔ شگفتہ ایک کرسچن سکول میں کیرٹیکر یا نگراں کی حیثیت سے کام کرتی تھیں جبکہ ان کے شوہر شفقت معذور ہیں۔

جوزف نے بتایا کہ جیل میں جب وہ شفقت سے ملنے گئے تو انھوں نے بتایا کہ ان پر تشدد کر کے ان سے جرم کا اعتراف کروایا گیا ہے۔’انھوں نے مجھے بتایا کہ انھیں مار مار کر ان کی ٹانگ توڑ دی۔‘تصویر کے کاپی رائٹImage captionشگفتہ کوثر ایک سکول میں ملازمت کرتی تھیں

اس جوڑے کے چار بچے ہیں اور وہ اب گہرے صدمے میں ہیں۔ جوزف کہتے ہیں 'وہ ہر وقت روتے ہیں اور اپنے والدین کو یاد کررہے ہیں، وہ ان سے دوبارہ ملنا چاہتے ہیں۔‘انسانی حقوق کی تنظیموں کا مؤقف ہے کہ پاکستان میں توہینِ رسالت کے الزامات اکثر یا تو اپنی ذاتی دشمنیوں کا انتقام لینے کے لیے لگائے جاتے ہیں یا پھر اقلیتی برادریوں کو نشانہ بنانے کے لیے۔

شفقت اور شگفتہ کے وکیل نے بی بی سی کو بتایا کہ ان کی اپنے پڑوسیوں سے لڑائی ہوئی تھی اور ممکن ہے کہ انھوں نے شگفتہ کے نام پر سم کارڈ لے کر ان سے بدلہ لینے کے لیے یہ حرکت کی ہو۔پاکستان میں توہین رسالت کے مقدمات میں سزا اکثر اعلی عدالتوں میں اپیل پر ختم کردی جاتی ہے۔ پچھلے سال ایک دہائی تک سلاخوں کے پیچھے رہنے والی آسیہ بی بی کو سپریم کورٹ نے بری کیا اور وہ پاکستان سے کینیڈا منتقل ہوگئیں۔ عدالت کے اس فیصلے پر ملک میں متعدد مذہبی جماعتوں کی طرف سے پر تشدد مظاہرے بھی ہوئے۔

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیںپاکستان کی سپریم کورٹ نے مسیحی خاتون آسیہ بی بی کی سزائے موت کو کالعدم قرار دے دیا ہے۔سیف الملکوک نے بی بی سی کو بتایا کہ ان کے خیال میں جوڑے کے خلاف کیس آسیہ بی بی کے کیس سے بھی زیادہ کمزور ہے اور انھیں بین الاقوامی برادری سے اسی طرح کی حمایت ملنی چاہیے۔ انھوں نے یہ بھی کہا کہ اگر انھیں بری کردیا جاتا ہے تو جوڑے کو کسی دوسرے ملک میں سیاسی پناہ کی ضرورت ہوگی۔ جبکہ جوزف کا کہنا تھا کہ انھیں امید ہے انصاف ملے گا اور آسیہ بی بی کے خلاف مقدمے کے خلاف فیصلے سے انھیں مزید حوصلہ ملا ہے۔

سپریم کورٹ کے جج صاحبان، جنھوں نے آسیہ بی بی کو بری کیا تھا، نے توہینِ رسالت کے جھوٹے مقدمات کے بارے میں خبردار کیا تھا۔ لیکن اس کے باوجود ملک میں اس طرح کے کیسز میں اضافہ دیکھا گیا ہے۔ اپریل میں احمدی برادری سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون پر توہینِ رسالت کے جرم میں مقدمہ چلایا گیا۔ وہ ایک مسجد کو چندا دینے کی کوشش کر رہی تھیں جب ان پر یہ الزام لگایا گیا۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ریاستی دہشتگردی جاری، پلواما میں مزید ایک نوجوان شہید کراچی:لوڈشیڈنگ کےخلاف دھرنا،قوالوں کی انٹری سونگھنے کی حس نہ رہے تو کیا ہوتا ہے؟ مزید پڑھ: BBC News اردو »

Ye bhi Kuttiya Asia Mashee ki tarah touheen Risalat karkay Foreign Nationalty lay lain gay aur aazad hokar Pakistan say Rawana hojain gay ye in kutton kay liye aasan tariqa hay kay gustakhi karo aur bahir chalay jao Religious critics monger آپۖ صلی اللہ علیہ وسلم طبیعت کے نرم اور اخلاق کے نیک تھے، طبیعت میں مہربانی تھی سخت مزاج نہ تھے۔ کسی کی دل شکنی نہ کرتے تھے۔ بدکلامی اور بدخوئ سے اجتناب فرماتے تھے۔ آپۖ کی خوش اخلاقی رہتی دنيا تک ايک مثال ہۓ۔ آپۖ نے برائ کے بدلے کبھی برائ نہيں کی، بلکہ ہميشہ معافی پر ذور ديا۔

یہ بہت زیادتی کی بات ھے کہ ریاست کےلئے کہ ایسے بے گناہ لوگوں کو جیلوں میں پھنسا کر خود غائب ھو جاتی ھے ۔۔ جیل کے اندر گھٹن اور باھر موت کس کا انتخاب کریں ۔ جبکہ دوسری طرف بے گناہ ثابت ھو جاتے ہیں لیکن ان کے 10 سال کون واپس کرے گا کیونکہ پاکستان میں تو عدالت خود بھی قید ھے ۔ Pakistan m yohna abad jasay case b h kia kabi bbc nay usk lwahqeen ko insaf dilanay ka lea koshish ki h ? 2. Sochnay kibat ye h k in faislu m itni takheer Q huwi aisay faislay chand dinu m hi sunay jany chaheay taa k halat zyada khrab a hu or shiddat na barhay

ان لوگوں کا بھی باہر جانے کا پروگرام تو نہیں ۔۔۔🤔 عسائیوں کی ایک چالاکی دیکھیں انڈیا میں یہ اپنا نام رابرٹ ، ونسنٹ ۔ جارج، وغیرہ نام رکھتے ہیں لیکن پاکستان میں مسلمانوں کو دھوکا دینے کے لیے مسلمانوں والا نام رکھتے ہیں۔ ہے نا چالاکی پاکستان میں جو پادری ہیں وہ زیادہ تر Goa سے آتے ہیں اسلئے انکا نام جارج،جان،رابرٹ،جوزف وغیرہ ملے

بہت سے اقلیتی توہین رسالت جان بوجھ کر بھی کرتے ہیں تاکہ وہ باھر کسی ملک جانے میں کامیاب ھو جائیں۔ اور یوں وہ عیش کی زندگی گزار سکیں۔ کرناٹک کی ریاست ِGoa اس کی بڑی مثال ہے۔ اب تک سیکڑوں کرسچن پرتگال جاچکے ہیں ۔ Dreaming to meet French President soon after release .... Encouraging more blasphemousy For all those who are saying we should hang them both- Are Hindu-Extremists doing right? Of cource;Their sentiments hurt when muslim eat cow's meat(beef).

Save Minorities. Very Sad. Justice delayed means Justice denied لاہور ہائی کورٹ نے سزائے موت کیوں دی لنڈے کے لیبرل قصور صرف مولوی کا ہے عدالتوں میں مولوی بیٹھے ہوئے ہیں سزائے موت مولویوں نے دی ہے کوئی اور خبر نظر نہیں آتی تمہیں If we believe that prophet is powerful then leave to prophet or God to deal with. Christians r very poor in Pakistan and have no one to defend them. Leave them.alone and take religion out of humanity

You always supported people involvedanti Islamic acts and blasphemy BBC News جس مولوی نے ایسا جھوٹا الزام لگایا اسکو عبرک ناک سزا ہونی چاہیے تاکہ مزید لوگ ایسے جھوٹے الزامات لگانے سے گریز کریں۔ ان کو پھانسی ہو بہت افسوس کی بات ہے اس طرح کی حرکتیں کر کہ ہم غیر مسلموں کو اسلام سے دور کرتے ہیں ، آپ خود سوچیں جب غیر مسلم یہ دیکھتے ہیں کہ اس مذہب میں اتنی شدت پسندی ہے تو وہ کیسے متاثر ہوں گے ، پتہ نہیں پاکستانی لوگوں کو گستاخی کے حقیقی معنی بھی پتہ ہی یا نہیں رسول خدا تو رحمت اللعلمین ہیں

ان کا نام استعمال کر کہ اس طرح کا ظلم نہیں کرنا چاہیے خدا ہماری اقلیتوں کو ان شر پسند اور فسادی عناصر سے محفوظ رکھے جو آئے دن کسی مجبور کو توہین مذہب کے جھوٹے مقدمے میں پھنسا دیتے.اس دور میں تو کئی کئی سم کارڈ رکھنے کی اجازت تھی.ویسے بھی اقلیت کا تناسب ایک فیصد سے بھی کم ہے وہ کیوں ننانوے فیصد کی توہین کرکے خودکشی کا خطرہ مول لے گی

مجھےیہ کیسں بھی آسیہ بی بی کی طرح جھوٹا ہی لگ رہا

امریکہ میں سیاہ فام شہری کے قتل کے خلاف دنیا بھر میں احتجاجی مظاہرےامریکہ میں سیاہ فام شہری کے قتل کے خلاف دنیا بھر میں احتجاجی مظاہرے USA GorgeFloyd GorgeFloydMurder JusticeForFloyd Protests WorldWide GlobalAngerGrows MinneapolisRiots realDonaldTrump StateDept UN SecPompeo

جاپان میں آتش بازی کے ساتھ وبا کے خاتمے کے لیے دعائیںجاپان کے مختلف حصوں میں کورونا وائرس کی وبا کے خاتمے کے لیے دعاوں کے ساتھ آتش بازی کی گئی ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ایک ہی وقت میں ہونے والی اس آتش

امریکہ میں مظاہروں کے چھٹے روز پرتشدد واقعات میں اضافہافریقی نژاد امریکی شہری جارج فلائیڈ کی پولیس تحویل میں ہلاکت کی وجہ سے مظاہرے کی چھٹی رات امریکہ بھر کے مختلف شہروں میں پر تشدد واقعات رونما ہوئے اور نیشنل گارڈز کو تعینات کرنا پڑا۔ مکافات عمل کیا یہ جو ہلاک کیا ہے وہ انسان ہے یہ کچھ اور ہم نے اسلیئے پوچھا کیونکہ شام کے بچے بھی انسان ہے اور کشمیر کے بچے بھی انسان ہے فرق اتنا ہے کہ شام فلسطین کشمیری مسلمان ہے اور یہ کوئی ، کوئی بات نہیں کشمیریوں و فلسطینوں کی بھی اللہ پاک ہے انکا بدلا لے گا

کے پی کے حکومت کا کورونا وائرس ایمرجنسی میں توسیع کا اعلان - ایکسپریس اردوایمرجنسی توسیع ڈی جی ہیلتھ سروسز اور ماہرین وبائی امراض کے مشورے پر کی گئی، اعلامیہ آج وزیراعظم کی کرونا وائرس پر تقریر سن کر میں نے اپنی قبر کا آرڈر دے دیا 😢😢

پاکستان میں کورونا کے وارتیز، کیسز اور اموات میں اضافہاسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )عیدالفطر گزرنے کے فوری بعد کورونا وائرس کے پھیلاﺅ میں تیزی دیکھنے میں آئی ہے کیونکہ گزشتہ روز ایک دن میں سب سے زیادہ 88 اموات

بھارت میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے ذمہ دار ٹرمپ ہیں: رکن پارلیمنٹسنجے راوت کا کہنا ہے کہ وزیر اعظم نریندر مودی کے دوست ٹرمپ کے لیے منعقدہ اس استقبالیہ تقریب کی وجہ سے گجرات میں کرونا وائرس پھیلا ہے۔